امریکہ : ہند نژاد اٹارنی پریت بھرارا کو صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے کیا برخاست

Mar 12, 2017 10:35 AM IST | Updated on: Mar 12, 2017 10:35 AM IST

نیویارک : ہند نژاد امریکی اٹارنی پریت بھرارا کو ٹرمپ انتظامیہ نے برطرف کر دیا ہے ۔ انہوں نے اوباما انتظامیہ کے دوران مقرر کئے گئے 46  اٹارنی  سے استعفی مانگنے کے حکم کے بعد اپنا عہدہ چھوڑنے سے انکار کر دیا تھا ، جس کے بعد ٹرمپ انتظامیہ نے یہ قدم اٹھایا ہے ۔

بھرارا نے ناردن ڈسٹرکٹ آف نیو یارک کے اپنے دائرہ اختیار کا ذکر کرتے ہوئے ٹویٹ کیا کہ میں نے استعفی نہیں دیا ۔ کچھ لمحات پہلے مجھے برخاست کر دیا گیا ۔  ناردن ڈسٹرکٹ آف نیویارک کا امریکی اٹارنی ہونا میرے پیشہ ورانہ زندگی کا سب سے بڑا اعزاز رہے گا ۔  48 سالہ بھرارا سے قائم مقام ڈپٹی اٹارنی جنرل نے 10 مارچ کو فوری طور پر استعفی دینے کیلئے کہا تھا ۔

امریکہ : ہند نژاد اٹارنی پریت بھرارا کو صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے کیا برخاست

بھرارا نے نومبر میں ٹرمپ کی انتخابی جیت کے بعد ان سے ملاقات کی تھی ۔ اس ملاقات کے بعد میڈیا میں آئی خبروں میں کہا گیا تھا کہ ٹرمپ نے بھرارا کو ان کے عہدے پر قائم رہنے کیلئے کہا ہے ۔ سی این این نے نیو یارک کے سینیٹر چارلس شومر کے بیان کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ شومر امریکی اٹارنی سے ، خاص طور پر بھرارا سے ، استعفی کے لئے کئے گئے درخواستوں کی خبروں کو سن کر پریشان ہیں ۔

انہوں نے کہا ہے کہ صدر نے مجھے نومبر میں فون کیا تھا اور یقین دہانی کرائی تھی کہ وہ چاہتے ہیں کہ بھرارا ناردن ڈسٹرکٹ کے لئے امریکی اٹارنی کے عہدہ پر بنے رہیں ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز