بارسلونا حملے کے دو مشتبہ افراد مراکش میں گرفتار

Aug 23, 2017 04:56 PM IST | Updated on: Aug 23, 2017 04:56 PM IST

رباط ۔ بارسلونا میں وین حملے میں 13لوگوں کے مارے جانے کے واقعہ میں مبینہ طورپر سازش رچنے والوں سے تعلقات رکھنے والے دو مشتبہ افراد کو مراکش پولیس نے گرفتار کرلیا ہے۔ سرکاری ٹی وی چینل 2ایم نے آج یہ اطلاع دی۔ ان میں سے ایک 28سالہ شخص کو ناڈور میں گرفتار کیا گیا ہے جو میلیلا کے اسپینش انکلیو کے نزدیک ہی میں ہے۔ چینل کے مطابق اس پر نہ صرف اسلامک اسٹیٹ سے تعلقات ہونے کا شبہ ہے بلکہ اس نے رباط میں اسپین کے سفارتخانہ پر حملہ کا منصوبہ بھی بنایا تھا۔ حالانکہ اس مبینہ سازش کی تفصیلات نہیں مل سکی ہیں۔ رپورٹ کے مطابق بارسلونا حملے میں مشتبہ اور مراکش کے نوجوان شہریوں کے مابین راست طورپر کوئی تعلق ہونے کا پتہ نہیں چل سکا ہے۔ اس مشتبہ شخص کے ذریعہ فیس بک پر بارسلونا حملے کا جشن منانے کی خبر ضرور ہے۔

چینل کے مطابق الجیریا سے ملحق مراکش کے سرحدی اوزندو شہر سے دوسرے مشتبہ شخص کو گرفتار کیا گیا ہے۔ دوسرا مشتبہ شمال مشرقی اسپین کے ریپول کا رہنے والا ہے جہاں دہشت گردانہ سیل سے وابستہ کئی اراکین رہتے ہیں۔ دونوں مشتبہ افراد کو گزشتہ اتوار کو ہی گرفتار کرلیا گیا تھا۔ اس معاملے میں مراکش کے حکام نے ردعمل ظاہر کرنے سے انکار کردیا۔

بارسلونا حملے کے دو مشتبہ افراد مراکش میں گرفتار

تصویر: رائٹرز

خیال رہے کہ بارسلونا میں گزشتہ جمعرات کو اسپین پولیس نے 22سالہ مراکش کے شہری وین ڈرائیور یونس ابو یعقوب کو مار گرانے کا دعوی کیا تھا۔ اس کی وین نے لاس رامبلاس میں 13افراد کی جان لی تھی اور 120دیگر کو زخمی کردیا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز