یمن میں ہیضہ سے پانچ لاکھ افراد متاثر، تقریبا 2 ہزار اموات : ڈبلیو ایچ او

Aug 14, 2017 08:29 PM IST | Updated on: Aug 14, 2017 08:29 PM IST

جنیوا: یمن میں گزشتہ چار ماہ کے دوران متعدی بیماری ہیضہ کی وجہ سے اب تک 1،975 لوگوں کی موت ہو گئی ہے۔ عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے آج ایک بیان جاری کر یہ اطلاع دی۔ ڈبلیو ایچ او کے مطابق یمن میں اس بیماری سے اب تک تقریبا پانچ لاکھ لوگ متاثر ہوئے ہیں۔

ڈبلیو ایچ او نے بتایا کہ خراب پانی کی وجہ سے یمن میں ہر روز اسہال اور ڈائریا کے پانچ ہزار سے زیادہ نئے معاملے سامنے آ رہے ہیں۔ ڈبلیو ایچ او کے مطابق یمن کے بعض علاقوں میں ہیضہ سے متعلق معاملات میں نمایاں اضافہ دیکھنے کو ملا ہے۔ اعدادوشمار کے مطابق ہیضہ کے اب تک کل 503،484 معاملے سامنے آئے ہیں۔

یمن میں ہیضہ سے پانچ لاکھ افراد متاثر، تقریبا 2 ہزار اموات : ڈبلیو ایچ او

یہ متعدی بیماری گندہ کھانا کھانے اور خراب پانی پینے کی وجہ سے پھیلتی ہے۔ اگر چند گھنٹوں کے اندر علاج نہیں ہو ا تو ہیضہ سے موت بھی ہو سکتی ہے۔

ری کمنڈیڈ اسٹوریز