تارکین وطن پر ٹرمپ کی پالیسی سے متفق نہيں ہوں : ٹریسا مے

Jan 29, 2017 07:45 PM IST | Updated on: Jan 29, 2017 07:45 PM IST

لندن۔ برطانوی وزیر اعظم ٹریسا مے نے امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کےچند مسلم اکثریتی ممالک سے امریکہ میں آنے والے مہاجرین اور تارکین وطن پر عارضی روک سے متعلق ایک اگزیکٹیو آرڈ ر کو نافذ کرنے پر اپنی نا اتفاقی ظاہر کی ہے۔ برطانیہ کی حکمراں کنزرویٹو پارٹی کے ارکان نے کل مسٹر ٹرمپ کی اس پالیسی کی مخالفت نہیں کرنے کے لئے محترمہ ٹریسا مے کی نکتہ چینی کی تھی۔  ٹریسا مے کے ترجمان نے کہا کہ ریاست ہائے متحدہ امریکہ کی مہاجرین اور تارکین وطن سے متعلق پالیسی امریکی حکومت کا اندرونی معاملہ ہے اور اسی طرح اس معاملے میں برطانیہ کی پالیسی بھی برطانوی حکومت کا متعلقہ معاملہ ہے۔ ترجمان نے کہا کہ " تاہم، ہم اس قسم کی پالیسی سے متفق نہیں ہیں"۔ انہوں نے اس پالیسی کی وجہ سے برطانیہ کے شہریوں پر پڑنے والے اثرات کا بھی حوالہ دیا۔

واضح رہے کہ امریکی صدر نے سات مسلم اکثریتی ممالک سے امریکہ میں آنے والے سیاحوں اور تارکین وطن کی تعداد محدود کرنے سے متعلق ایک ایگزیکٹو آرڈر پر دستخط کئے تھے۔اس حکم کے تحت دہشت گردانہ حملوں سے بچنے کا حوالہ دیتے ہوئے شام اور چھ دیگر مسلم اکثریتی ممالک سے آنے والے پناہ گزینوں کے ملک میں داخل ہونے پر چار ماہ تک کے لئے عارضی روک لگا دی گئی ہے۔

تارکین وطن پر ٹرمپ کی پالیسی سے متفق نہيں ہوں : ٹریسا مے

تصویر: نیوز18 ڈاٹ کام

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز