بچے کو پنجرے میں قید کرکے بھوک سے مارنا چاہتا تھا باپ ، ماں بھی دے رہی تھی ساتھ ، وجہ جان کر اڑجائیں گے ہوش

پولیس یہ ماجرہ دیکھ کر دنگ رہ گئی اور اس نے فورا اس شخص کو گرفتار کرلیا ۔ یہ کنبہ سماج سے اس طرح سے قطع تعلق کرکے رہتا تھا کہ کئی دنوں تک باہر کے لوگوں کو اس کی بھنک تک نہیں لگ سکی کہ گھر کے اندر کیا ہورہا ہے ۔

Feb 11, 2019 03:54 PM IST | Updated on: Feb 11, 2019 03:54 PM IST

یوکرین کے نوووکریئنکا شہر میں ایک ایسا معاملہ سامنے آیا ہے ، جس نے پولیس اور شہر کے لوگوں سمیت پوری دنیا کا دل دہلا دیا ہے ۔ ایک ایسا باپ جو اپنے چار سال کے بیٹے کو لکڑی کے پنجرے میں بند کرکے اس کو بھوک سے مارنے کی کوشش کررہا تھا ، کیونکہ اس کو شک تھا کہ وہ اس کی اپنی اولاد نہیں ہے ۔ مارنے کا جو طریقہ اس نے منتخب کیا تھا ، وہ بھی کافی وحشیانہ تھا ۔ اس نے بچے کو ایک لکڑی کے پنجرے میں بند کردیا ۔

جب پولیس نے زبردستی گھر میں گھس کر بچہ کو اس کے باپ کی قید سے آزاد کرایا ، تو بچہ مرنے کی حالت تک پہنچ چکا تھا ۔ وہ حرکت بھی نہیں کرپارہا تھا ۔ اس کا وزن کم ہو کر صرف سات کلو رہ گیا تھا اور اس کے پورے جسم کی ہڈیاں باہر نکل آئی تھیں ۔ وہ اتنا کمزور ہوگیا تھا کہ صرف ہڈیوں کا ڈھانچہ ہی نظر آرہا تھا ۔ جسم پر ذرہ برابر بھی گوشت نہیں تھا اور اس کی ایک ایک ہڈی واضح طور پر دکھائی دے رہی تھی ۔

بچے کو پنجرے میں قید کرکے بھوک سے مارنا چاہتا تھا باپ ، ماں بھی دے رہی تھی ساتھ ، وجہ جان کر اڑجائیں گے ہوش

بچے کو پنجرے میں قید کرکے بھوک سے مارنا چاہتا تھا باپ ، ماں بھی دے رہی تھی ساتھ ، وجہ جان کر اڑجائیں گے ہوش

Loading...

پولیس یہ ماجرہ دیکھ کر دنگ رہ گئی اور اس نے فورا اس شخص کو گرفتار کرلیا ۔ یہ کنبہ سماج سے اس طرح سے قطع تعلق کرکے رہتا تھا کہ کئی دنوں تک باہر کے لوگوں کو اس کی بھنک تک نہیں لگ سکی کہ گھر کے اندر کیا ہورہا ہے ۔ کافی وقت تک جب بچہ نظر نہیں آیا ، تو آس پاس کے لوگوں کو شک ہوا ۔ اس کے بعد ایک سماجی کارکن نے پولیس میں اس کی شکایت کی اور پھر چھاپہ ماری کی گئی ۔ گھر اندر سے بند تھا ، اس لئے پولیس کو دروازہ توڑ کر داخل ہونا پڑا ۔

یہ بھی پڑھیں : اوبر کیب ڈرائیور نے خاتون سے کی گندی بات ، 100 ڈالر کے بدلے سیکس کا دیا آفر  

 

اندر کا نظارہ دل دہلا دینے والا تھا ۔ ایک چار سال کا بچہ ایک لکڑی کے پنجرے میں مردہ حالت میں قید تھا ۔ اس کا پورا جسم اس کی غلاظت میں لت پت تھا ۔ وہ بول بھی نہیں پارہا تھا ۔ پولیس کا کہنا ہے کہ اگر تھوڑی اور تاخیر ہوجاتی تو بچے کی جان بچانا ناممکن ہوجاتا ۔

پولیس نے بچہ کے باپ کو گرفتار کرلیا ، جس کو اپنے بیٹے کی جان لینے کے الزام میں عمر قید کی سزا سنائی گئی ہے ۔ کیس کی سماعت کے دوران یہ بات سامنے آئی کہ بچہ کے باپ کو اپنی بیوی پر شک تھا ، اس کو لگتا تھا کہ یہ بچہ اس کا نہیں ہے بلکہ اس کے کسی عاشق کا ہے ، اس لئے وہ اس کی جان لینا چاہتا تھا ۔ حالانکہ کیس کے دوران جب دونوں کا ڈی این اے ٹیسٹ ہوا تو پتہ چلا کہ باپ کا شک غلط تھا ۔ وہ اس کا ہی بچہ تھا ، لیکن اس وقت تک کافی دیر ہوچکی تھی ۔

یہ بھی پڑھیں : عاشق کے ساتھ بستر پر بیٹھی تھی حاملہ ماں ، چار سال کے بیٹے نے کیا ایسا کام کہ جان کر اڑ جائیں گے ہوش

 

بچہ کی ماں اس پورے واقعہ کے دوران سب کچھ اپنی آنکھوں سے دیکھتی رہی اور اس نے کچھ بھی نہیں کیا ۔ اس لئے اس کے خلاف بھی قتل کی کوشش میں ساتھ دینے کا مقدمہ چلایا گیا ۔ پولیس نے بچہ اور اس کی تین بہنوں کو چائلڈ کیئر کی تحویل میں بھیج دیا ہے ۔ اب بچہ کی طبیعت میں کافی سدھار ہے اور اس کا وزن بھی بڑھ گیا ہے ۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز