in-jammu-kashmir-langate-area-clashes-took-place-a-7th-class-student-died-in-the-incident-فورسز نے پتھراو کے مرتکب مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے پیلٹ بندوقوں کا استعمال کیا جس کے نتیجے میں 11 سالہ لڑکا اویس احمد میر ولد مشتاق احمد میر جاں بحق ہوا۔– News18 Urdu

کپواڑہ میں مظاہرین اور فورسز کے درمیان جھڑپ، 7ویں میں پڑھنے والے طالب علم کی موت

فورسز نے پتھراو کے مرتکب مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے پیلٹ بندوقوں کا استعمال کیا جس کے نتیجے میں 11 سالہ لڑکا اویس احمد میر ولد مشتاق احمد میر جاں بحق ہوا۔

Apr 11, 2019 09:32 PM IST | Updated on: Apr 11, 2019 09:40 PM IST

شمالی کشمیر کے ضلع کپواڑہ کے مندی گام لنگیٹ میں جمعرات کی شام بارہمولہ پارلیمانی حلقے میں پولنگ کے اختتام پرکچھ مظاہرین کی سیکورٹی فورسز کے ساتھ ہونے والی پر تشدد جھڑپ میں ایک ساتویں جماعت کا طالب علم جاں بحق ہوا۔ اس کی عمر 11 سال بتائی جا رہی ہے۔

فورسز نے پتھراو کے مرتکب مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئے پیلٹ بندوقوں کا استعمال کیا جس کے نتیجے میں 11 سالہ لڑکا اویس احمد میر ولد مشتاق احمد میر جاں بحق ہوا ہے۔ بتایا جارہا ہے کہ اویس ساتویں جماعت کا طالب علم تھا۔ ذرائع نے بتایا کہ فورسز کی کارروائی میں شدید طور پر زخمی ہونے والے اویس کو سب ضلع اسپتال کرال گنڈ لے جایا گیا جہاں سے ڈاکٹروں نے اسے ضلع اسپتال ہندوارہ ریفر کیا، تاہم وہ راستے میں ہی دم توڑ گیا۔

کپواڑہ میں مظاہرین اور فورسز کے درمیان جھڑپ، 7ویں میں پڑھنے والے طالب علم کی موت

فائل فوٹو

مقامی میڈیا کی ایک رپورٹ میں ضلع اسپتال ہندوارہ کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر رئووف کے حوالے سے کہا گیا ہے کہ مذکورہ نوجوان کو مردہ حالت میں اسپتال لایا گیا۔ڈاکٹر رئووف کے مطابق اویس پیلٹ لگنے سے جاں بحق ہوا ہے۔ اسے مردہ حالت میں اسپتال لایا گیا۔

Loading...

بتادیں کہ جموں وکشمیر میں جمعرات کو پارلیمانی انتخابات کے پہلے مرحلے کے تحت بارہمولہ اور جموں پارلیمانی حلقوں میں ووٹ ڈالے گئے۔جمعرات شام پانچ بجے تک تشدد کا کوئی بڑا واقعہ پیش نہیں آیا تھا اور بیشتر جگہوں پر پولنگ کا عمل پُرامن طور پر اپنے اختتام کو پہنچا۔

 

Loading...