mukesh ambani bails out anil ambani in ericsson payout case day before sc deadline anil thanks mukesh and nita ambani مکیش امبانی نے ادا کیا چھوٹے بھائی کی کمپنی کا قرض ، انل امبانی نے ادا کیا شکریہ– News18 Urdu

مکیش امبانی نے ایرکسن ادائیگی معاملہ میں کی انل امبانی کی مدد ، انل نے مکیش و نیتا امبانی کا شکریہ ادا کیا

آر کام کے ایک ترجمان نے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے پر عمل کرتے ہوئے ایرکسن کو 550 کروڑ کی ادائیگی پوری ہوگئی ہے ۔ اس ادائیگی کے ساتھ ہی آر کام کی ایرکسن کے ساتھ چل رہی 18 ماہ پرانی قانونی لڑائی بھی ختم ہوگئی ہے ۔

Mar 18, 2019 10:51 PM IST | Updated on: Mar 18, 2019 11:22 PM IST

ریلائنس انڈسٹریز کے چیئرمین مکیش امبانی نے چھوٹے بھائی انل امبانی کی قرض میں ڈوبی کمپنی ریلائنس کمیونیکیشن لمیٹڈ ( آر کام ) کے قرض کی ادائیگی کی ہے ۔ اس کے بعد انل نے بڑے بھائی مکیش اور بھابھی نیتا امبانی کا بقایہ کی ادائیگی میں مدد کرنے کیلئے شکریہ ادا کیا ہے ۔ مکیش امبانی کی مدد سے انل نے سوئیڈن کی کمپنی ایرکسن کے 458.77 کروڑ روپے ادا کئے ۔

آر کام کے ایک ترجمان نے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے پر عمل کرتے ہوئے ایرکسن کو 550 کروڑ کی ادائیگی پوری ہوگئی ہے ۔ اس ادائیگی کے ساتھ ہی آر کام کی ایرکسن کے ساتھ چل رہی 18 ماہ پرانی قانونی لڑائی بھی ختم ہوگئی ہے ۔

مکیش امبانی نے ایرکسن ادائیگی معاملہ میں کی انل امبانی کی مدد ، انل نے مکیش و نیتا امبانی کا شکریہ ادا کیا

فائل فوٹو ۔

انل امبانی نے ایک بیان جاری کرکے کہا کہ بحران کی اس گھڑی میں میرے ساتھ کھڑے رہنے کیلئے میں اپنے بڑے بھائی مکیش اور بھابھی نیتا کا شکریہ ادا کرتا ہوں ، ایسے موقع پر مدد کرکے انہوں نے یہ دکھایا کہ اپنے فیملی اقدار کے تئیں سچائی کے ساتھ کھڑے رہنا کتنا ضروری ہے ۔ میں اور میرا کنبہ ان کے اس قدم کا کافی احسان مند ہے اور اس نے ہم پر گہری چھاپ چھوڑی ہے ۔

آر کام فروری میں پہلے ہی سپریم کورٹ میں 118 کروڑ روپے جمع کرچکا تھا ۔ سویڈش فرم نے آرکام کے نیٹ ورک کا انتظام اور آپریشن چلانے کیلئے 2014 میں ایک سمجھوتے پر دستخط کئے اور گزشتہ سال بقایا رقم کو لے کر عدالت کا دروازہ کھٹکھٹایا تھا ۔

یہ دوسرا موقع ہے جب مکیش امبانی نے اپنے چھوٹے بھائی کی مدد کی ہے ۔ سال 2018 میں مکیش امبانی کی ریلائنس جیو انفوکام نے آر کام کی وائرلیس خدمات کو 3000 کروڑ روپے میں خریدا تھا ۔ بازار میں پرائس وار کی وجہ سے آرکام کو پیسوں کی کمی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔

آر کام ایک وقت ملک کی دوسری سب سے بڑی ٹیلی کام کمپنی تھی ، لیکن ریوینیو میں گراوٹ ، خسارہ میں اضافہ اور 46 ہزار کروڑ روپے کے قرض کی وجہ سے سال 2017 کے آخری ایام میں اسے اپنے وائرلیس کا کاروبار بند کرنا پڑا ۔

آر کام اور ایرکسن کے درمیان 2017 میں قانونی جنگ شروع ہوئی تھی ۔ ایرکسن نے بینک کرپسی کورٹ کا دروازہ کھٹکھٹاتے ہوئے الزام لگایا تھا کہ 2013 میں آر کام کے نیٹ ورک کے آپریشن کو لے کر ہوئے سات سال کے سودے کے تحت اس کو 1500 کروڑ روپے کی ادائیگی نہیں کی گئی ۔

اس کے بعد معاملہ نیشنل کمپنی لا ٹریبیونل سے نیشنل کمپنی لا اپیلیٹ ٹریبیونل میں چلا گیا ۔ یہاں پر دونوں کمپنیوں کے درمیان 30 ستمبر 2018 تک 550 کروڑ روپے کی ادائیگی کرنے پر اتفاق رائے ہوا ۔ 30 ستمبر تک آر کام کی جانب سے ادائیگی نہیں ملنے پر ایرکسن نے سپریم کورٹ میں عرضی داخل کی ۔ سپریم کورٹ نے آر کام کو 15 دسمبر 2018 تک ادائیگی کرنے کیلئے کہا ۔ اس تاریخ تک بھی ادائیگی نہیں ہوپائی ۔

جب 550 کروڑ روپے کی ادائیگی نہیں ہوپائی تو ایرکسن نے آرکام کے چیئرمین انل امبانی اور ان کی دو یونٹ کے خلاف توہین کی درخواست داخل کی ۔ فروری میں سپریم کورٹ نے انل امبانی کو پھٹکار لگائی اور کہا کہ 19 مارچ تک سود سمیت ادائیگی کی جائے ۔

ڈسکلیمر : نیوز 18 اردو ریلائنس انڈسٹریز کی کمپنی نیٹ ورک 18 میڈیا اینڈ انویسٹمنٹ لمیٹڈ کا حصہ ہے ۔ نیٹ ورک 18 میڈیا اور انویسٹمنٹ لمیٹڈ کی ملکیت ریلائنس انڈسٹریز کے پاس ہی ہے ۔