تہاڑ جیل میں حیوانیت ! مسلم قیدی کا الزام ، جیلر نے پیٹھ پر گودا "اوم "۔– News18 Urdu

تہاڑ جیل میں حیوانیت ! مسلم قیدی کا الزام ، جیلر نے پیٹھ پر گودا "اوم "۔

ملک کی سب سے ہائی پروفائل اور محفوظ مانی جانے والی دہلی کی تہاڑ جیل میں ایک حیران کردینے والا معاملہ سامنے آیا ہے۔

Apr 19, 2019 11:21 PM IST | Updated on: Apr 19, 2019 11:21 PM IST

ملک کی سب سے ہائی پروفائل اور محفوظ مانی جانے والی دہلی کی تہاڑ جیل میں ایک حیران کردینے والا معاملہ سامنے آیا ہے۔ جیل کے نبیر نام کے ایک قیدی نے کڑکڑڈوما کورٹ میں جیل سپرنٹنڈنٹ راجیش چوہان کی شکایت کی ہے۔ نبیر نے اس کی پیٹھ پر "اوم "گودنے کا الزام لگایا ہے۔

نیوزی ایجنسی اے این آئی کے مطابق قیدی کے وکیل نے بتایا کہ جیل کے بیرک میں انڈکشن چولہا کام نہیں کررہا تھا ۔ نبیر نے جب اس کی شکایت کی تو جیل سپرنٹنڈنٹ راجیش چوہان نے اس کی بری طرح سے پٹائی کی اور اس کی پیٹھ پر میٹل کے ذریعہ "اوم "کا نشام بنادیا ۔

تہاڑ جیل میں حیوانیت ! مسلم قیدی کا الزام ، جیلر نے پیٹھ پر گودا

تہاڑ جیل میں حیوانیت ! مسلم قیدی کا الزام ، جیلر نے پیٹھ پر گودا "اوم "۔

الزام ہے کہ جیل انتظامیہ نے نوجوان کو دو دنوں تک زبردستی بھوکا پیاسا رکھا ۔ شکایت میں کہا گیا ہے کہ نوجوان سے کہا گیا کہ اس نے نوراتری کا ورت رکھ لیا ہے اور اب وہ ہندو ہے ۔

معاملہ سامنے آنے کے بعد تہاڑ جیل کے ڈی جی نے کہا کہ ڈی آئی جی نے اس کی جانچ کی ہے۔ فی الحال نبیر کو دوسری جیل میں منتقل کردیا گیا ہے ۔ اس معاملہ میں تفصیلی رپورٹ عدالت میں پیش کی جائے گی۔