ایل او سی سے آتےہیں ہتھیار اور جعلی کرنسی ! مودی حکومت نے پاکستان کے ساتھ تجارت پر لگائی روک– News18 Urdu

ایل او سی سے آتےہیں ہتھیار اور جعلی کرنسی ! مودی حکومت نے پاکستان کے ساتھ تجارت پر لگائی روک

مرکزی وزارت داخلہ نے جموں وکشمیر میں سلام آباد (اوڑی) اور چکن دا باغ (پونچھ) کراسنگ پاؤنٹس پر ہونے والے ہند و پاک دو طرفہ تجارت کو 19 اپریل سے تا حکم ثانی معطل رکھنے کے احکامات جاری کردیے ہیں۔

Apr 18, 2019 11:21 PM IST | Updated on: Apr 18, 2019 11:21 PM IST

مرکزی وزارت داخلہ نے جموں وکشمیر میں سلام آباد (اوڑی) اور چکن دا باغ (پونچھ) کراسنگ پاؤنٹس پر ہونے والے ہند و پاک دو طرفہ تجارت کو 19 اپریل سے تا حکم ثانی معطل رکھنے کے احکامات جاری کردیے ہیں۔ جمعرات کو مرکزی وزارت داخلہ کی طرف سے جاری حکم نامہ میں کہا گیا ہے کہ سری نگر مظفرآباد اور پونچھ راولاکوٹ راستوں کی غیرقانونی ہتھیاروں، منشیات اور جعلی کرنسی کی ٹرانسپورٹیشن کے لئے استعمال کی رپورٹیں موصول ہوئی ہیں۔

حکم نامہ میں کہا گیا ہے کہ حکومت ہند کو رپورٹیں موصول ہوئی ہیں کہ ایل او سی تجارت راستوں کو پاکستان میں مقیم عناصر کی جانب سے غلط استعمال میں لایا جارہا ہے۔ غلط استعمال میں ہتھیاروں، منشیات، جعلی کرنسی وغیرہ کی ٹرانسپورٹیشن شامل ہیں ۔

ایل او سی سے آتےہیں ہتھیار اور جعلی کرنسی ! مودی حکومت نے پاکستان کے ساتھ تجارت پر لگائی روک

علامتی تصویر

مرکزی وزارت داخلہ کے حکم نامہ کے مطابق سخت ریگولیٹری نظام کو یقینی بنائے جانے تک ایل او سی تجارت کو معطل رکھنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ 'سخت ریگولیٹری نظام کو یقینی بنائے جانے تک کراس ایل او سی تجارت کو معطل کیا جاتا ہے۔ اس کا مقصد جائز تجارت کو یقینی بنانا ہے۔ سخت ریگولیٹری نظام سے جموں وکشمیر کے لوگوں کا ہی فائدہ ہوگا ۔

حکم نامے میں کہا گیا ہے کہ اس پر عمل درآمد 19 اپریل سے ہی شروع ہوگا۔ بتادیں کہ شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ میں آر پار کے تاجروں کے درمیان سری نگر مظفر آباد راستے سے تجارت کا سلسلہ 2008ء سے جاری ہے۔ یہ تجارت ہفتے میں چار دن منگل سے لیکر جمعہ تک ہوتی ہے۔ پونچھ راولاکوٹ راستے سے ہونے والی ہند و پاک تجارت بھی 2008 ء سے جاری ہے۔

Loading...

Loading...