تیجس ایکسپریس ٹرین میں خراب کھانے کی وجہ سے 24مسافروں کی طبیعت بگڑی ، دوافسران معطل

Oct 16, 2017 10:36 PM IST | Updated on: Oct 16, 2017 11:16 PM IST

ممبئی: گوا۔ممبئی کے درمیان چلنے والی سب سے تیزرفتار تیجس ایکسپریس ٹرین میں خراب کھانے سے 24مسافروں کے بیمار پڑنے کے نتیجے میں آئی آر سی ٹی سی نے آج یہاں دوافسران کو معطل کردیا ہے اور ایک افسرکو وجہ بتلاؤ نوٹس جاری کیا ہے۔ ذرائع کے مطابق آرسی ٹی سی کے مڈگاؤں میں آریا افسر اور ٹرین میں تعینات منیجر کو معطل کردیا گیا اور کیٹرنگ ٹھیکہ دارکو وجہ بتلاؤ نوٹس جاری کیا گیاہے۔فی الحال کھانے کی جانچ کے بعد رپورٹ موصول نہیں ہوئی ہے۔

سینٹرل ریلوے کے سنیئر ڈی سی ایم اور اے سی ایم ایس اور آرسی ٹی سی کے اے جی ایم پر مشتمل ایک کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جوکہ خراب کھانے کے واقعہ کی جانچ کرے گی جس میں 25مسافر اتوار کو صبح کاناشتہ کے بعد بیمار پڑگئے اور حال میں شروع کی جانے والی جدیدترین اورتیز رفتار ٹرین میں خراب کھانے کا واقعہ پیش آنے کے بعد ریلوے حکام حیرت زدہ ہیں۔یہ ٹرین روزانہ کرمالی گوا اور سی ایس ایم ٹی ممبئی کے درمیان چلائی جاتی ہے اور کوکن روٹ پر چپلون پر ٹھہرتی ہے ۔ان متاثر مسافروں کو مختلف اسپتالوں میں داخل کیا گیا ہے۔

تیجس ایکسپریس ٹرین میں خراب کھانے کی وجہ سے 24مسافروں کی طبیعت بگڑی ، دوافسران معطل

بتایا جاتا ہے کہ مسافروں،ٹرین کنڈیکٹر اور ٹی ٹی ای اور اے سی میکنک سے تفتیش کے دوران پتہ چلا کہ دوگروپ خراب کھانے کا شکار بنے ہیں ،ان میں سے ایک ہماچل پردیش اور دوسرامغربی بنگال کا ہے۔ناشتہ تناول کرنے کے بعدمسافروں کو قے اور چکر آنے لگے جس کے بعد افراتفری مچ گئی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز