ہائی کورٹ کے فیصلہ کا خیر مقدم لیکن پھیری والوں کو کاروبار کی منتقلی کیلئے مہلت دینا ضروری : ابوعاصم اعظمی

پھیری والوں کو پہلے مناسبت جگہ پر بسایا جائے اس وقت بعد ہی ان کی منتقلی عمل میں لائی جائے کیونکہ برسہا برس سے پھیری والے یہاں کاروبارکر رہے ہیں ایسی صورت میں کاروبار کی منتقلی سے ان پر فاقہ کشی کی نوبت آجائیگی

Nov 02, 2017 07:43 PM IST | Updated on: Nov 02, 2017 07:43 PM IST

ممبئی: پھیری والوں کو پہلے مناسبت جگہ پر بسایا جائے اس وقت بعد ہی ان کی منتقلی عمل میں لائی جائے کیونکہ برسہا برس سے پھیری والے یہاں کاروبارکر رہے ہیں ایسی صورت میں کاروبار کی منتقلی سے ان پر فاقہ کشی کی نوبت آجائیگی اس لئے پھیری والوں کو مہلت دی جائے تاکہ وہ اپنے کاروبار کو دوسری جگہ منتقل کر نے کے بعد یہاں مستقل کر سکے اس قسم کا مطالبہ یہاں ابوعاصم اعظمی نے کیا ہے ۔

ابوعاصم اعظمی نے کورٹ کے فیصلہ کا خیر مقدم کرتے ہوئے یہ درخواست کی ہے کہ پہلے پھیری والوں کی مناسب جگہ پر بازآبادکاری کی جائے اس کے بعد ہی انہیں ہٹایا جائے ہائیکورٹ نے اسٹیشن سے 100 سے 150 میٹر کی دوری پر پھیری والوں پر پابندی عائد کر دی ہے ایسے میں بی ایم سی حکم کی تعمیل کر کے کارروائی کرتی ہے تو پھیری والوں پر فاقہ کشی کی نوبت آجائیگی ۔ پھیری والے کاروبار ہی تو کر رہے ہیں لوٹ مار یا پھر چوری ڈکیتی تو نہیں کر رہے ہیں ایسے میں ان پھیری والوں کو مہلت دی جانی چاہئے جو برسوں سے اپنا کاروبار کر رہے ہیں ایسی میں اگر انہیں اچانک بے دخل کر دیا جاتا ہے ان پر فاقہ کشی کی نوبت آجائیگی کیونکہ پھیری والے اپنے کنبہ کی بھی پرورش کر تے ہیں جب تک ان پھیری والوں کو مناسب مقام پر منتقل نہیں کیا جاتا یا بازآبادکاری نہیں ہوتی اسوقت ممبئی میونسپل کارپوریشن ان پر کارروائی نہ کرے کیونکہ اچانک کارروائی سے پھیری والوں کو بھوکے مرنے کی نوبت آجائیگی ۔

ہائی کورٹ کے فیصلہ کا خیر مقدم لیکن پھیری والوں کو کاروبار کی منتقلی کیلئے مہلت دینا ضروری : ابوعاصم اعظمی

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز