ابو عاصم اعظمی نے مہاراشٹر میں ’’ملی تحریک‘‘ کے نام سے قائم کی نئی تنظیم

Jul 22, 2017 03:05 PM IST | Updated on: Jul 22, 2017 03:05 PM IST

ناندیڑ۔ گئو رکشا کے نام پرملک بھر میں مسلمانوں اور دلتوں کے خلاف نفرت پھیلائی جا رہی ہے اور بے گناہوں کو موت کے گھاٹ اتارا جا رہا ہے ۔ایسے ماحول میں قومی یکجہتی کو فروغ دینے کیلئے سماج وادی پارٹی کے ریاستی صدر ابو عاصم اعظمی نے مہاراشٹر میں ’’ملی تحریک‘‘ کے نام سے ایک تنظیم قائم کی ہے ۔ ناندیڑ میں ملی تحریک کی جانب سے جلسہ عام کا انعقاد کیا گیا ۔ جلسہ میں ملک کے موجودہ حالات پر شدید تشویش ظاہر کی گئی ۔

گئو رکشا کے نام پر ہورہے ظلم نے مسلمانوں میں شدید بے چینی پھیلا دی ہے ۔ حالات کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے سماج وادی پارٹی کے سرکردہ لیڈر ابو عاصم اعظمی نے ’ ملی تحریک‘  کے پلیٹ فارم سے مسلمانوں میں شعور بیدار کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اس کے لئے ریاست کے مختلف اضلاع میں اجلاس منعقد کئے جا رہے ہیں ۔ اسی سلسلہ میں ناندیڑ میں جلسہ عام کا انعقاد عمل میں آیا ۔ جلسہ سے خطاب کے دوران ابو عاصم اعظمی نے جہاں ایک طرف مودی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا اور ملک میں پھیل رہی بد امنی کے لئے اسے کا ذمہ دار ٹھہرایا ۔ وہیں دوسری طرف ملک کے امن پسند غیر مسلم بھائیوں کو بھی یہ پیغام دینے کی کوشش کی ہے کہ گئو رکشا کے نام پر ہو رہی سیاست کی سچائی کو سمجھیں اور باہمی میل جول کو بڑھانے میں ایک دوسرے کا ساتھ دیں ۔

ابو عاصم اعظمی نے مہاراشٹر میں ’’ملی تحریک‘‘ کے نام سے  قائم کی نئی تنظیم

ملی تحریک کے پلیٹ فارم سے ناندیڑ میں منعقدہ جلسہ عام میں مختلف تنظیموں اورجماعتوں کے نمائندوں نے بھی شرکت کی اور موجودہ حالات میں مسلمانوں میں باہمی اتحاد کے قیام کو وقت کی اہم ترین ضرورت بتایا ۔ اس کے علاوہ گئو رکشا کے نام پر ہو رہے ظلم کے خلاف ایک منظم تحریک چلانے اور حکومت پر دباؤ بنانے کی اپیل کی گئی ۔ جلسہ میں کثیر تعداد میں لوگ شریک ہوئے اور ملی اتحاد کے قیام کا عزم ظاہر کیا ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز