درگاہ حضرت خواجہ معین چشتی کے دیوان زین العابدین کا کشمیر میں علیحدگی پسند لیڈروں پر لگام لگانے کا مطالبہ

Jul 01, 2017 07:07 PM IST | Updated on: Jul 01, 2017 07:20 PM IST

اجمیر : حضرت خواجہ معین الدین چشتی کی درگاہ کے دیوان سید زین العابدین علی خان نے کہا ہے کہ کشمیر کے پتھر بازوں کو اکسانے والے علیحدگی پسند لیڈروں پر لگام لگانا ضروری ہے۔ مسٹر دیوان نے ایک بیان میں کہا کہ پتھربازوں سے بھی بڑے ملک دشمن علیحدگی پسند لیڈر ہیں جو انہیں پتھرباز ی کے لئے اکساتے ہیں اور دہشت گردوں کو بچانے میں مدد کرتے ہیں ۔ ان پر لگام لگانا ضروری ہے۔

انہوں نے کشمیر کے نوجوانوں کے نام اپنے پیغام میں کہا کہ کشمیر میں میر واعظ جیسے رہنما اصل گنہہ گار اور ملک دشمن ہیں جو کشمیر ی نوجوانوں کو بھڑکا کر پاکستان کے منصوبوں کو پورا کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت ہند ایسے علیحدگی پسند لیڈروں پر لگام لگادے تو کشمیر کا مسئلہ فوراً حل ہوجائے ۔

درگاہ حضرت خواجہ معین چشتی کے دیوان زین العابدین کا کشمیر میں علیحدگی پسند لیڈروں پر لگام لگانے کا مطالبہ

علامتی تصویر

انہوں نے کہا کہ انہیں رہنماوں کی شہ پر دہشت گردوں نے کشمیر میں اسکول اور کالج جلائے اور بند کروائے تاکہ ایک پوری نسل کوناخواندہ رکھا جائے اور اس ناخواندہ نسل کے ذریعہ پاکستان کے ایجنڈے کو نافذ کرکے کشمیر کو ہندوستان سے الگ کیا جاسکے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز