راجستھان : گائے لے جارہے دو مسلم نوجوانوں کی ہندتوادی تنظیموں نے بے کی رحمانہ پٹائی ،عمر کی موت ، طاہرسنگین طور پر زخمی

راجستھان کے الور میں پہلو خان کے قتل کا معاملہ ابھی تک پوری طرح ٹھنڈا بھی نہیں ہوا تھا کہ اب مزید دو مسلم گئو پالکوں کی بے رحمی سے پٹائی کا معاملہ سامنے آیا ہے

Nov 12, 2017 02:10 PM IST | Updated on: Nov 12, 2017 02:12 PM IST

الور : راجستھان کے الور میں پہلو خان کے قتل کا معاملہ ابھی تک پوری طرح ٹھنڈا بھی نہیں ہوا تھا کہ اب مزید دو مسلم گئو پالکوں کی بے رحمی سے پٹائی کا معاملہ سامنے آیا ہے ، جس میں ایک مسلم نوجوان کی جائے واقعہ پر ہی موت ہوگئی ہے ۔ واقعہ کی اطلاع ملتے ہی کثیر تعداد میں میو برادری کے لوگ اسپتال پہنچ گئے اور انہوں نے واقعہ کی اعلی سطحی جانچ کا مطالبہ کیا۔

خبروں کے مطابق الور ضلع سے پک اپ وین میں گائے ل کر گھاٹ مکا گاوں جارہے دو مسلم گئو پالکوں کی مشتعل افراد نے بے رحمی سے پٹائی کردی اور ایک کو گولی ماردی ۔ عمر خان نامی مسلم نوجوان کی جائے واقعہ پر ہی موت ہوگئی جبکہ دوسرا طاہر  ہریانہ کے ایک پرائیویٹ اسپتال میں زیر علاج ہے۔ مقتول عمر خان کی لاش کو الور کے راجیو گاندھی اسپتال کے مردہ گھر میں رکھا گیا ہے۔

راجستھان : گائے لے جارہے دو مسلم نوجوانوں کی ہندتوادی تنظیموں نے بے کی رحمانہ پٹائی  ،عمر کی موت ، طاہرسنگین طور پر زخمی

واقعہ کی اطلاع ملتے ہی بڑی تعداد میں میو برادری کے لوگ الور کے راجیو گاندھی اسپتال پہنچے اور انہوں نے دونوں کی شناخت کی ۔ برادری کے لوگوں کا کہنا ہے کہ پولیس کے ساتھ مل کر ہندتوادی تنظیموں سے وابستہ افراد نے گائے لے کر جارہے نوجوانوں کی پٹائی ہے اور اس کے بعد گولی مار کر قتل کردیا ۔ برادری کے لوگوں نے واقعہ کی اعلی سطحی جان کا مطالبہ کیا ہے ۔ گووند گنج تھانہ میں اس سلسلہ میں ایف آئی آر درج کروائی جارہی ہے۔

خیال رہے کہ الور ضلع کے بہروڑ میں تین اپریل کو گئو رکشکوں نے پہلو خان کا پیٹ پیٹ کر قتل کردیا تھا ۔ اس سلسلہ میں چھ افراد کے خلاف نامزد رپورٹ درج کروائی گئی تھی ۔ مگر سی بی سی آئی ڈی نے سبھی کو کلین چٹ دیدی ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز