چاند نے انسانیت کی پیش کی ایک بہترین مثال، گمشدہ ہندوخاتون کو پہنچایا اس کے گھر

Jul 11, 2017 04:13 PM IST | Updated on: Jul 11, 2017 04:13 PM IST

واشم۔ ملک میں مذہب کے نام پر جہاں انسانیت کا گلا گھونٹا جارہا ہے وہیں کچھ لوگ ایسے بھی ہیں جو بلا مذہب و ملت کی تفریق کے انسانیت کے رشتے کو اہم رشتہ مانتے ہیں ۔ انسانیت کی ایک ایسی ہی مثال  مہاراشٹر کے اورنگ آباد کے شیخ چاند نے پیش کی ۔ پیروں سے معذور شیخ چاند نے واشم ضلع کی گمشدہ ایک  ہندو ضعیف خاتون کواس کے گھر پہنچایا جو انسانیت کے رشتے کی بہترین مثال ہے ۔

دراصل واشم ضلع کے راجوراگاوں کی ایک ضیعف ہندو خاتون پنڈرپور یاترا کے لئے گئی تھی۔ یاترا کے دوران یہ خاتون اپنے جتھے سے جدا ہو گئی ۔ پشپا نامی اس خاتون کو نہ تو کسی کا موبائل نمبر یاد تھا اورنہ اپنے گھر جانے کا صحیح راستہ۔ اس خاتون کو جو گاڑی ملتی یہ اسی میں بیٹھ جاتی۔ جیسے تیسے پشپا اورنگ آباد پہنچی اور وہاں سے کسی ایسی بس میں سوار ہوگئی جو اس کے گاوں نہیں جاتی تھی۔ کنڈکٹر نے اورنگ آباد سے کئی کلو میٹر کی دوری پر پشپا کو آدھی  رات میں بیچ سڑک پر اتار دیا۔

چاند نے انسانیت کی پیش کی ایک بہترین مثال، گمشدہ ہندوخاتون کو پہنچایا اس کے گھر

 پشپا رات کے وقت بیچ  سڑک پر روتے ہوئے کھڑی تھی ۔ اسی وقت وہاں سے مزدوری کرکے لوٹ رہے شیخ چاند نے دیکھا کہ  ایک ضعیف خاتون بیچ سڑک پر رورہی ہے۔ چاند نے خاتون سے رونے کی وجہ دریافت کی۔ پشپا نے شیخ  چاند کو پوری آپ بیتی سنائی ۔آپ بیتی سن کر پیروں سے معذور ہونے کے باوجود شیخ چاند نے پشپا کو اسکے گھر پہنچانے کا وعدہ کیا۔ مزدوری کرکے گھر لوٹنے والے شیخ چاند نے اپنے گھر جانے کے بجائے وعدے کے مطابق پشپا کو اس کے گھر پہنچانے کو ہی اہم فریضہ سمجھا اور اپنی مزدوری سے کمائے ہوئے پیسوں سے  پشپا کو اس کے گھر تک پہنچا دیا۔ جس کی وجہ سے راجورا گاوں والوں نے شیخ چاندکی خوب آوبھگت کی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز