گوا میں سیاست تیز، اکثریت کانگریس کے پاس ، لیکن حکومت سازی کا بی جے پی کرے گی دعوی ، پاریکر ہوں گے وزیر اعلی ؟

Mar 12, 2017 09:56 AM IST | Updated on: Mar 12, 2017 09:57 AM IST

گوا بی جے پی کی جوڑ توڑ کی کوشش ، اکثریت کانگریس کو لیکن حکومت سازی کا بی جے پی کرے گی دعوی  ، پاریکر ہوں گے وزیر اعلی ؟

گوا کے انتخابی نتائج میں بھارتیہ جنتا پارٹی دوسرے نمبر پر رہی ہے ، مگر اس نے جوڑ توڑ کھیل شروع کریا ہے اور دعوی کیا ہے کہ وہ ہی ریاست میں حکومت بناَئے گی ۔ ریاست میں 13 نشستیں جیتنے والی بی جے پی اتوار کو ہی حکومت بنانے کا دعوی پیش کر سکتی ہے ۔ ذرائع کا دعوی ہے کہ بی جے پی کو چھوٹی جماعتوں اور کچھ آزاد ممبران اسمبلی کی حمایت حاصل ہے ۔ اس کے ساتھ ہی یہ بھی قیاس آرائی کی جارہی ہے کہ موجودہ وزیر دفاع منوہر پاریکر کی گوا کے وزیر اعلی کے طور پر واپسی ہو سکتی ہے ۔

گوا میں سیاست تیز، اکثریت کانگریس کے پاس ، لیکن حکومت سازی کا بی جے پی کرے گی دعوی ، پاریکر ہوں گے وزیر اعلی ؟

اتوار کو گوا کے بی جے پی لیڈر گورنر مردلا سنہا سے ملنے کا وقت مانگیں گے ۔  اس کے ساتھ ہی وہ گورنر کو حمایت کا خط بھی سپرد کرسکتے ہیں ۔ انتخابات میں تین تین سیٹ حاصل کرنے والی مہاراشٹروادی گومٹك پارٹی اور گوا فارورڈ فرنٹ کے علاوہ 2 آزاد امیدوار کی حمایت کا بی جے پی دعوی پیش کر سکتی ہے ۔ کہا جا رہا ہے کہ مرکزی وزیر نتن گڈکری بھی اس سلسلے میں گوا پہنچ گئے ہیں ۔ ساتھ ہی ایسا مانا جا رہا ہے کہ گوا کے سابق وزیر اعلی رہے منوہر پاریکر پھر وزیر اعلی کا عہدہ سنبھال سکتے ہیں ۔

خود پاریکر نے بھی انتخابی نتائج کے بعد اس کے اشارے دیئے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی طے کرتی ہے ، اس سے زیادہ میں کچھ نہیں کہوں گا ۔ جو پارٹی کہے گی اسے میں تسلیم کروں گا ۔ اس کے ساتھ ہی پاریکر نے کہا ہے کہ اگرچہ بی جے پی کو واضح اکثریت نہ ملی ہو ، لیکن ریاست میں ان کی حکومت بننے کی پوری امید ہے ۔

ادھر ریاست میں سب سے زیادہ 17 نشستیں جیتنے والی کانگریس نے بھی گورنر سے ملنے کیلئے وقت مانگا ہے ۔ اس سے یہ صاف ہے کہ کانگریس بھی ریاست میں اقتدار پر قابض ہونے دعوی کرے گی ۔ واضح رہے کہ 40 نشستوں کی گوا اسمبلی میں حکومت بنانے کے لئے کسی بھی پارٹی کو 21 سیٹوں کی اکثریت حاصل کرنا ضروری ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز