احمدآباد میں 13 ستمبر کو رکھی جائے گی بلیٹ ٹرین کی سنگ بنیاد

Sep 06, 2017 07:47 PM IST | Updated on: Sep 06, 2017 07:47 PM IST

احمدآباد۔ گجراتیوں کو جلد ہی بلیٹ ٹرین میں سفر کرنے کا موقع ملنے والا ہے ۔ اس کے لئے جاپان کے وزیراعظم شنزو ایبے اور بھارت کے وزیراعظم نریندر مودی دو روزہ گجرات کا دورہ کرنے والے ہیں ۔ 13 ستمبر کو جاپان کے وزیراعظم شنزو ایبے اور بھارت کے وزیراعظم  نریندر مودی کے ہاتھوں احمدآباد میں بلیٹ ٹرین پروجیکٹ کی سنگ بیناد رکھی جائے گی جسے لے کر احمدآباد میں زور شور سے تیاریاں کی جا رہی ہیں۔

   وزیر اعظم نریندر مودی نے بھارت میں بلیٹ ٹرین دوڑانے کا ایک خواب دیکھا تھا جس کو جلد پورا کرنے کے لئے سب سے پہلے مودی گجرات میں بلیٹ ٹرین کی سنگ بنیاد رکھنے والے ہیں ۔ ملک کی ہائی اسپیڈ ٹڑین یعنی  بلیٹ ٹرین احمد آباد سے ممبئی کے درمیان چلائی جائے گی۔  اس کا آغاز احمدآباد کے سابر متی اسٹیشن  سے کیا جا رہا ہے۔ اس سلسلے میں کل ریلوے بورڈ کے چیئرمین اشونی لوہانی نے احمدآباد  کے سابرمتی اسٹیشن کا جائزہ لیا اور کہا کہ سابر متی  ریلوے اسٹیشن پراچھے ڈھنگ سے کام چل رہا ہے ۔ مسافروں کو بلیٹ ٹرین میں اچھا تجربہ ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کی سہولتیں بڑھانے کے لئے ریل انتظامیہ اچھے طریقے سے کام کر رہی ہے۔

احمدآباد میں 13 ستمبر کو رکھی جائے گی بلیٹ ٹرین کی سنگ بنیاد

واضح رہے کہ بلیٹ ٹرین پروجیکٹ پرایک لاکھ کروڑ کا خرچ آئے گا ۔ اس بلیٹ ٹرین کے لئے تیز رفتار ریلوے لائن احمد آباد اور ممبئی کے درمیان بنائی جائیگی ۔ بلیٹ ٹرین کی رفتار فی گھنٹہ 320 کلو میٹر ہوگی اور 508 کلو میٹرکا فاصلہ طے کرنے میں اسے صرف دو گھنٹے لگیں گے ۔ امید کی جا ر ہی ہے کہ 2023 تک احمدآباد سے بلیٹ ٹرین شروع ہو جائیگی ۔ اس منصوبے کی لاگت کا 81 فیصد جاپان سے قرض لیا جائیگا ۔ احمدآباد وسیٹرن ریلوے کے جنرل مینیجر انل کمار گپتا نےاس پروجیکٹ کے بارے میں جانکاری دیتے ہوئے بتایا کہ سابرمتی ریلوے اسٹیشن پر نو پلیٹ فارم بنائے جائیں گے ۔ ریلوے اسٹیشن پر ٹرمینل بنانے کا کام شروع ہو گیا ہے ۔ اس کے لیے 2021 تک سابر متی ریلوے اسٹیشن کی کایا پلٹنے والی ہے۔

ذرائع کے مطابق شینزو آبے، نریندر مودی کے ساتھ ساتھ سابرمتی آشرم بھی جائیں گے ۔ اس کے علاوہ دونوں وزیراعظم کئی اور بڑے منصوبے گجرات میں شروع کریں گے، جس میں جاپان ا نڈسٹریئل پارک ون اور ٹو کی بھی شروعات کی جائے گی ۔ کہا جا رہا ہے  کہ 15 سے 20 جاپانی کمپنیاں گجرات میں سرمایہ کاری کرنے کے لئے دلچسپی دکھا رہی ہیں ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز