داود ابراہیم کے بھائی اقبال سے تفتیش میں کئی سنسنی خیز انکشافات ، ڈان کی درجن بھر فرضی کمپنیوں کا چلا پتہ

وقت گزر نے کے ساتھ ہی انڈر ورلڈ بھی اب کافی بدل چکا ہے۔ پہلے اپنی کالی کمائی کو حوالے جیسے طریقوں سے یہاں سے وہاں پہنچانے یا کالے سے سفید بنانے کی بجائے اب یہ کارپوریٹ طریقہ اپنا رہا ہے۔

Oct 25, 2017 11:34 PM IST | Updated on: Oct 25, 2017 11:34 PM IST

ممبئی : وقت گزر نے کے ساتھ ہی انڈر ورلڈ بھی اب کافی بدل چکا ہے۔ پہلے اپنی کالی کمائی کو حوالے جیسے طریقوں سے یہاں سے وہاں پہنچانے یا کالے سے سفید بنانے کی بجائے اب یہ کارپوریٹ طریقہ اپنا رہا ہے۔ یہ انکشاف انڈر ورلڈ ڈان داود ابراہیم کے بھائی اقبال کاسکر کے تفتیش کے دوران ہوا ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق فرضی ناموں سے قائم شیل کمپنیوں کے ذریعہ وصولی کی رقم بیرون ممالک بھیجی جارہی تھی۔ تھانے پولیس کے ذرائع سے ملی معلومات کے مطابق اب تک کی پوچھ تاچھ میں ایسی درجن بھر کمپنیوں کا انکشاف ہوا ہے، جن کا استعمال زبردستی وصول کی گئی رقم کو بیرو ن ممالک بھیجنے کیلئے کیا جارہا ہے۔

این ڈی ٹی وی کے مطابق اگر ذرائع کی مانیں تو ڈی کمپنی صرف ان شیل کمپنیوں کے ذریعہ ہی نہیں بلکہ ہیرا ٹرینڈنگ کے ذریعہ بھی پیسے غیر ملکوں میں بیٹھے اپنے آقاوں کے پاس بھیجتی تھی۔ تھانے پولیس کی جانچ میں ممبئی کے ایک بڑے ہیرا تاجر اور سورت کے ایک اس وقت کے کسٹم افسر کا نام بھی سامنے آیا ہے۔ ای ڈی اقبال کاکسر کے خلاف پہلے ہی پی ایم ایل اے کے تحت جانچ شروع کرچکی ہے۔ اب اس کے خلاف شکنجہ کسنے کیلئے یہ شیل کمپنیاں اہم ثبوت ثابت ہوسکتی ہیں۔

داود ابراہیم کے بھائی اقبال سے تفتیش میں کئی سنسنی خیز انکشافات ، ڈان کی درجن بھر فرضی کمپنیوں کا چلا پتہ

داود ابراہیم کا چھوٹا بھائی اقبال کاسکر ۔ فائل فوٹو

اس درمیان عدالت نے اقبال کاسکر اور دیگر ملزموں کی پولیس حراست چار نومبر تک بڑھا دی ہے۔ اقبال اور اس کے ساتھیوں کے خلاف زبردستی وصولی کے تین معاملات درج ہوچکے ہیں اور ان پر مکوکہ بھی لگایا جاچکا ہے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز