معروف اسلامی اسکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک کا پاسپورٹ منسوخ ، این آئی اے کی درخواست پر اٹھایا گیا قدم

Jul 18, 2017 09:11 PM IST | Updated on: Jul 18, 2017 09:12 PM IST

ممبئی : حکومت نے معروف اسلامی اسکالر ذاکر نائک کا پاسپورٹ منسوخ کر دیا ہے۔ قومی جانچ ایجنسی (این آئی اے) کے ذرائع کے مطابق ممبئی میں واقع علاقائی پاسپورٹ آفس نے جانچ ایجنسی کی درخواست پر نائیک کا پاسپورٹ منسوخ کرنے کا قدم اٹھایا ہے۔ این آئی اے نے گزشتہ ہفتے ہی وزارت خارجہ سے نائک کا پاسپورٹ منسوخ کرنے کی درخواست کی تھی۔ وزارت خارجہ نے نائک کو نوٹس جاری کر کے پوچھا تھا کہ اس کا پاسپورٹ کیوں نہ منسوخ کردیا جائے۔

ڈاکٹر ذاکر نائک پر دہشت گردانہ سرگرمیوں اور منی لانڈرنگ کی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کا الزام ہے۔ این آئی اے ان الزامات کی تحقیقات کر رہی ہے۔ نائک کی تنظیم اسلامک ریسرچ فاؤنڈیشن پرغیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی وجہ سے پہلے ہی پابندی عائد کی جا چکی ہے۔

معروف اسلامی اسکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک کا پاسپورٹ منسوخ ، این آئی اے کی درخواست پر اٹھایا گیا قدم

تصویر: ٹوئٹر

بنگلہ دیش میں گزشتہ سال ہونے والے دہشت گردانہ حملے میں ذاکر نائک کے مبینہ کردار کی بات سامنے آنے پر وہ جانچ ایجنسیوں کے راڈار پر آ گیا تھا۔ این آئی اے نے گزشتہ نومبر میں اس کے خلاف مجرمانہ دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا تھا۔اسے لانے کے لئے انٹرپول کی بھی مدد لی جا رہی ہے۔ ڈاکٹر ذاکر نائیک پر اشتعال انگیز اور نفرت پھیلانے والے تقریر کرنے کا بھی الزام ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز