ناگپورمیں ’بیف‘ کے شبہ میں سلیم شاہ کی پٹائی معاملہ میں چار افراد گرفتار

Jul 14, 2017 08:20 AM IST | Updated on: Jul 14, 2017 08:20 AM IST

ممبئی۔ مہاراشٹر کے ناگپور میں ایک شخص کو اپنی اسکوٹی کی ڈگی میں بیف لے جانے کے الزام میں بری طرح پٹائی کے معاملہ میں چارافراد کوپولیس نے گرفتارکرلیا ہے۔حالانکہ پولیس نے مداخلت کرکے سلیم اسماعیل شاہ نامی شخص کوبچا لیاجوکہ اپنی اسکوٹی سے سفرکررہا تھا۔ پولیس کے مطابق ایک بس اسٹاپ کے قریب چند افرادکوامنیرگاؤں جاتے ہوئے روکا اورجسکے پاس 35کلوگرام گوشت تھا،لیکن ملزمین نے گائے کا گوشت لے جانے کا الزام لگاتے ہوئے اس کی پٹائی کر دی۔ ناگپور ضلع کے بھارسنگی گاؤں میں بدھ کی صبح اسکوٹر کی ڈگی میں گوشت لے جانے والے سلیم اسماعیل شاہ پاس کے ہی کاٹول گاؤں کا رہنے والا ہے۔ صبح وہ اپنی گاڑی پرجلال کھیڑاسے لوٹ رہاتھا کہ ملزمین نے حملہ کردیا۔اسے شدیدچوٹیں آئی ہیں اورایک اسپتال میں داخل کیاگیاہے۔

جلال کھیڑاکے پولیس انسپکٹروجے کمارتیواری نے کہا کہ مرہم پٹی کے بعدگھرجانے کی اجازت دے دی گئی ہے۔ تنڈولکرپرہارسنگھٹن کاتحصیل چیف ہے اور اچل پورامراوتی آزادایم ایل اے بچوکڈوکامعاون ہے۔تیواری نے تحصیل چیف ہونے کی تصدیق کی ہے۔ انہوں نے ان چاروں کے بجرنگ دل یاوی ایچ پی سے وابستہ ہونے کی تردیدکی اورکہا کہ گوشت کے نمونے جانچ کے لیے بھیجے گئے ہیں۔

ناگپورمیں ’بیف‘ کے شبہ میں سلیم شاہ کی پٹائی معاملہ میں چار افراد گرفتار

بتایاجاتاہے کہ سلیم کوبھارسنگی بس اسٹاپ کے سامنے اچانک کچھ لوگوں نے پکڑ لیا اور پٹائی کرتے ہوئے گائے کاٹ کر اس کا گوشت ڈگی میں لے جانے کا الزام لگایا۔ سلیم چلاتے رہے کہ یہ بیف نہیں ہے اور گائے نہیں کاٹی۔ لیکن پھر بھی بھیڑ انہیں پیٹتی رہی۔واقعہ کی معلومات ملنے پر موقع پر پہنچی پولیس نے اسے بھیڑ سے چھڑایا۔ پولیس نے مار پیٹ کا معاملہ درج کر 4 نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کیا ہے۔ تاہم سلیم کے خلاف کوکیس نہیں درج کیاگیا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز