گیتا جوہری گجرات کی پہلی خاتون ڈی جی پی بنیں، 1983 بیچ کی آئی پی ایس افسر ہیں

Apr 04, 2017 08:43 PM IST | Updated on: Apr 04, 2017 08:43 PM IST

گاندھی نگر۔  گجرات میں 1983 بیچ کی آئی پی ایس افسر گیتا جوہری کو آج ریاست کا ڈائریکٹر جنرل آف پولیس (ڈی جی پی) بنا دیا گیا جو اس عہدے کی ذمہ داری سنبھالنے والی پہلی خاتون پولیس افسر ہیں۔ سپریم کورٹ کے حکم کے بعد عہدے سے ہٹائے گئے ڈی جی پی پی پی پانڈے کی جگہ محترمہ جوہری کی تقرری کی گئی ہے۔ مسٹر پانڈے کو ہٹانے کا حکم سپریم کورٹ نے سابق پولیس افسر جولیا ربیری کی درخواست پر گجرات ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف ان کی اپیل پر کل سنایا تھا۔ مسٹر ربیری نے عشرت جہاں تصادم معاملے میں ملزم اور اس معاملہ میں جیل میں رہ چکے مسٹر پانڈے کی تقرری کو منسوخ کرنے کی مانگ کی تھی۔

گجرات کے وزیر قانون پردیپ سنگھ جڈیجا نے آج محترمہ جوہری کی تقرری کا اعلان کرتے ہوئے بتایا کہ ایک انتہائی قابل پولیس افسر محترمہ جوہری مسٹر پانڈے کے بعد ریاست کی سینئر آئی پی ایس افسر تھیں۔ وزیر اعلی وجے روپانی نے انہیں ان کے موجودہ عہدے گجرات پولیس ہاؤسنگ کارپوریشن کے منیجنگ ڈائریکٹر کے ساتھ ساتھ ڈی جی پی کے عہدے کا اضافی چارج دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ محترمہ جوہری نے عہدہ سنبھالنے کے بعد کہا کہ ان کی ترجیح گجرات میں امن اور قانون کی صورت حال کو برقرار رکھنا اور خواتین کے مسائل پر خصوصی توجہ دینا رہے گی۔ واضح رہے کہ 1980 بیچ کے آئی پی ایس افسر مسٹر پانڈے کو عشرت معاملے میں ضمانت پر رہا ہونے کے بعد ترقی دی گئی تھی۔ بعد میں انہیں ڈی جی پی بنا دیا گیا تھا۔ کچھ وقت پہلے ریٹائرمنٹ سے عین قبل ان کی سروس میں تین مہینہ کی توسیع کی گئی تھی۔

گیتا جوہری گجرات کی پہلی خاتون ڈی جی پی بنیں، 1983 بیچ کی آئی پی ایس افسر ہیں

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز