روزگار اور بدعنوانی کو ختم کرنے کے معاملے پر وزیراعظم نے عوام سے جھوٹ بولا: راہل

Jan 31, 2017 10:16 AM IST | Updated on: Jan 31, 2017 10:16 AM IST

پنجی۔ کانگریس نائب صدر راہل گاندھی نے کل الزام لگایا کہ گوا کو بدعنوانی سے پاک کرنے اور ریاست میں نوجوانوں کو روزگار دینے جیسے وعدے کرنے والے وزیر اعظم نریندر مودی نے جھوٹ بولا ہے۔ راہل گاندھی نے یہاں سے 15 کلومیٹر دور ماپوسا اسمبلی حلقہ میں ایک انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا "پورا گوا جانتا ہے کہ ریاستی حکومت نے نوجوانوں کو روزگار نہیں دیا لیکن وزیر اعظم کہتے ہیں کہ انہوں نے بہت ترقی کی ہے۔ ہر شخص جانتا ہے کہ وزیر اعظم جھوٹ بول رہے ہیں۔ وہ کہتے ہیں کہ انہوں نے کرپشن ختم کر دیا ہے لیکن پورا گوا کہتا ہے کہ یہاں بدعنوانی کا ہی راج ہے۔ آج ہندوستان میں صرف ایک ہی شخص کا راج ہے اور گوا کو ریموٹ کے ذریعے دہلی سے چلایا جا رہا ہے۔ یہ ایک حقیقت ہے کہ جو وزیر اعظم چاہتے ہیں یا دہلی میں بیٹھے ان کے وزرا چاہتے ہیں، گوا میں وہی ہوتا ہے۔"

کانگریس نائب صدر نے کہا "آپ لوگ بھارتیہ جنتا پارٹی کے جھوٹے وعدوں سے دور رہیے۔ مسٹر مودی کی نوٹ بندی کے فیصلے سے پورا ملک بہت پریشان ہو چکا ہے اور اس کی سب سے زیادہ مار غریبوں پر پڑی ہے۔ یہ پارٹی ایک مذہب کا استعمال دوسرے مذہب کے خلاف کر کے شگاف پیدا کرتی ہے۔ آپ سب کو ان سے لڑنا ہے۔ گوا کی تقسیم نہیں ہوگی اور وہ متحد ہو کر اس کا مقابلہ کرے گا۔ "  گاندھی نے دعوی کیا کہ بی جے پی ملک کے امیر خاندانوں کو فائدہ پہنچانے کا کام کر رہی ہے اور غریب اور حاشیے پر پڑے لوگوں کو نظر انداز کیا جا رہا ہے۔غور طلب ہے کہ ریاست میں انتخابات کے اعلان کے بعد مسٹر گاندھی کی یہ پہلی انتخابی ریلی تھی۔ ریاست میں چار فروری کو ہونے والے اسمبلی انتخابات میں کانگریس نے 37 اسمبلی حلقہ میں اپنے امیدوار اتارے ہیں۔

روزگار اور بدعنوانی کو ختم کرنے کے معاملے پر وزیراعظم نے عوام سے جھوٹ بولا: راہل

فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز