راہل گاندھی کی کار پر ہوئے حملے کو لیکر گجرات میں کانگریس کا احتجاجی مظاہرہ

احمد آباد۔ گجرات میں راہل گاندھی پر حملے کے سبب پورے گجرات میں کانگریسی لیڈران نے مختلف مقامات پرجم کر اپنے غصے کا اظہار کرتے ہوئے احتجاجی مظاہرے کیے ۔

Aug 05, 2017 05:50 PM IST | Updated on: Aug 05, 2017 05:50 PM IST

احمد آباد۔ گجرات میں راہل گاندھی پر حملے کے سبب پورے گجرات میں کانگریسی لیڈران نے مختلف مقامات پرجم کر  اپنے غصے کا اظہار کرتے ہوئے احتجاجی مظاہرے کیے ۔ گجرات کے شہر راجکوٹ، وڈودرا، احمد آباد، کچھ، جام نگر اور بھروچ میں کانگریسی کارکنان نے بی جے پی کے خلاف حملہ بولا۔ راجکوٹ میں سی ایم  وجئے روپانی کے گھر کے باہر پہنچنے سے پہلے ہی پولیس نے کانگریسی کارکنا ن کو حراست میں لے لیا اوراس کے بعد سے وہاں سکیوریٹی اور زیادہ سخت کر دی گئی ۔

احمد آباد میں کانگریس کے احتجاجی مظاہرے پر پولیس نے پینتیس سے زائد کانگریسی کارکنان کو حراست میں لے لیا۔ راجکوٹ میں پچاس کانگریسی کارکنان زیر حراست ہیں وہیں بوٹاد میں سو کارکنان کو حراست میں لیا گیا۔ تاہم مختلف مقامات پر کانگریسی کارکنان نے  سی ایم اور پی ایم کا پتلا جلا کر احتجاجی مظاہرہ کیا اورحکومت کے خلاف نعرے بازی بھی کی ۔ اس  دوران کئی مقامات پر پولیس و کانگریسی کارکنان کے بیچ ہاتھا پائی بھی ہوئی ۔ راہل گاندھی کی کار پر ہوئے حملے کے بعد لوگوں میں جم کر غم وغصہ پھوٹتا نظر آ رہا ہے اور اس پر بی جے پی و کانگریس نے سیاسی روٹیاں سینکنا شروع کر دی ہیں۔ کانگریس کا کہنا ہے کہ  سوچی سمجھی سازش کے تحت حملہ کروایا گیا وہیں کل سی ایم وجئے روپانی نے بھی اس معاملے کی مذمت کی تھی ۔

راہل گاندھی کی کار پر ہوئے حملے کو لیکر گجرات میں کانگریس کا  احتجاجی مظاہرہ

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز