گئو رکشا کے نام پر وی ایچ پی اور بجرنگ دل کے شرپسندوں نے لی ایک اور مسلمان کی جان

Apr 05, 2017 12:15 PM IST | Updated on: Apr 05, 2017 01:10 PM IST

جے پور۔ راجستھان کے ضلع الور میں گئو رکشکوں نے گئو رکشا کے نام پر ایک اور مسلمان کی جان لے لی۔ یہ واقعہ ہفتہ کے روز کا ہے جب ہریانہ کے رہنے والے 15 لوگ چھ گاڑیوں میں مویشیوں کو لے کر جا رہے تھے۔ تبھی کچھ لوگوں نے بهروڑ کے پاس ان پر حملہ کر دیا۔ سب کے ساتھ بری طرح مار پیٹ کی گئی۔ اس مارپیٹ میں 50 سال کے پہلو خان کو شدید چوٹیں آئیں جس کی وجہ سے علاج کے دوران پیر کو ان کی موت ہو گئی۔

سیاست ڈاٹ کام کے مطابق، پولیس نے بتایا کہ پہلو خان اور ان کے چار دیگر ساتھی گائے خرید کر لے جا رہے تھے۔ انہوں نے اس سے متعلق دستاویزات بھی پیش کئے لیکن اس کے باوجود گئوركشكوں نے ان کی پٹائی کر دی۔

گئو رکشا کے نام پر وی ایچ پی اور بجرنگ دل کے شرپسندوں نے لی ایک اور مسلمان کی جان

مقامی بهروڑ پولیس کے مطابق، وشو ہندو پریشد اور بجرنگ دل سے منسلک گئوركشكوں نے ہفتے کی شام نیشنل ہائی وے -8 کے قریب جگواس کراسنگ کے پاس مویشیوں کو لے جا رہی گاڑی کو روکا۔ اس کے بعد گئوركشكوں نے پہلو خان اور ان کے ساتھیوں پر غیر قانونی طور پر گائے لے جانے کا الزام لگایا۔ حالانکہ وہ گایوں کو اپنی فارمنگ کے لئے لے جا رہے تھے۔ بتایا جاتا ہے کہ گئوركشكوں نے ان میں سے ایک ڈرائیور ارجن کو جانے دیا۔ اس کے بعد انہوں نے پہلو خان اور ان کے ساتھیوں کی جم کر پٹائی کی۔ اس میں پانچ لوگ بری طرح زخمی ہو گئے۔ اس کے بعد آنا فانا میں متاثرین کو اسپتال میں داخل کرایا گیا جہاں پہلو خان کی پیر کی رات کو موت ہو گئی۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز