اورنگ آباد میں قانونی معلومات اور دستور ہند سے نوجوانوں کو کیا جارہا واقف

Feb 06, 2017 07:08 PM IST | Updated on: Feb 06, 2017 07:08 PM IST

اورنگ آباد۔  اورنگ آباد میں ایس ڈی پی آئی اور پاپولر فرنٹ آف انڈیا کے اشتراک سے قانونی معلومات پرمبنی ایک روزہ ورکشاپ منعقد ہوا ۔ اس ورکشاپ کا مقصد مسلمانوں، دلتوں اور پسماندہ افراد  کو دستور ہند کی روشنی میں ان کے حقوق سے آگاہ کرنا اور قانونی معلومات فراہم کرنا ہے۔ اس ورکشاپ میں نوجوانوں کو  یو اے پی اے قانون کے تعلق سے بھی جانکاری دی گئی ۔ ایس ڈی پی آئی کا ماننا ہے کہ  مرکزی حکومت کا یو اے پی اے  قانون دستوری تقاضوں کی نفی کرتا ہے۔  اس لیے ایس ڈی پی آئی اس کے خلاف ریاست گیر مہم چلائے گی۔

 آئی ایس آئی ایس کے نام پر مسلم نوجوانوں کی دھرپکڑ،  حجاب پہننا جرم  کہلائے، گو رکشا کی آڑ میں انسانوں کی بے دردی سے پٹائی، دادری سے لیکر نجیب کی گمشدگی تک اقلیت مخالف رجحان کا ایک لامتناہی سلسلہ ہے جو دراز ہی ہوتا جا رہا ہے۔ ایسے میں ایس ڈی پی آئی اور پاپولرفرنٹ آف انڈیا نے مہاراشٹر میں دستور ہند سے واقفیت اور شہری حقوق  کے تعلق سے بیداری مہم شروع کی ہے ۔ اس مہم کے تحت شہر شہر قریہ قریہ تربیتی ورکشاپ منعقد کیے جا رہے ہیں ۔ اورنگ آباد میں ہوئے ایک روزہ  تربیتی ورکشاپ میں  ایس ڈی پی آئی کے ریاستی صدر نے شرکت کی۔  اس موقع پر شرکا کو قانون کی بنیادی جانکاری اور شہر کی تعمیر میں  کیسے کلیدی رول ادا کیا جاسکتا ہے، اس کی جانکاری دی گئی ۔  ایس ڈی پی آئی اور پاپولرفرنٹ  آف انڈیا کے اشتراک سے یہ مہم ریاست گیرسطح پر چلائی جارہی ہے ۔ مہم کے ذمہ داروں کا کہنا ہے کہ اب تک پندرہ اضلاع میں اس طرح کے ورکشاپ ہوچکے ہیں۔  2017 کے آخر تک  پوری ریاست میں ایسے ورکشاپ  منعقد کرنے کا عزم ہے ۔

اورنگ آباد میں قانونی معلومات اور دستور ہند سے نوجوانوں کو کیا جارہا واقف

ریاستی صدر نے بتایا  کہ ورکشاپ میں بنیادی طور پر قانونی معلومات اور آر ٹی آئی کے تعلق سے جانکاری دی گئی ۔ دن بھر کے ورکشاپ میں گروپ ڈسکشن، تحریری مشق، مسائل کو لیکر تبادلہ خیال اور سوال و جواب کے سیشن ہوئے ۔ اس کےعلاوہ سماج دشمن عناصر سے کیسے نمٹا جائے، معاشرے  کو نشے کی دلدل سے نکالنے ، رشوت خوری اورذخیرہ اندوزی کرنے والوں کے خلاف آر ٹی آئی کو ایک ہتھیار کے طور پر استعمال کرنے کا مشورہ دیا گیا۔ ایس ڈی  پی آئی کے ذمہ داروں کا ماننا ہے کہ مسلمانوں میں قانون کی جانکاری کا فقدان پایا جاتا ہے ، جس کا خمیازہ ان کی بیجا گرفتاریوں کی شکل میں ظاہر ہوتاہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز