مہاراشٹر میں مراٹھا ریزرویشن احتجاج کے دوران بند اور تشدد سے زندگی متاثر

اورنگ آباد شہر میں بند کا سب سے زیادہ اثر پڑا

Aug 09, 2018 08:58 PM IST | Updated on: Aug 09, 2018 08:58 PM IST

ممبئی : مہاراشٹر میں ایک بار پھر مراٹھا ریزرویشن کے احتجاج کے دوران تشددپھوٹ پڑا اورسب سے زیادہ اثر اورنگ آباد، پونے ، اکولہ اور ناندیڑ میں ہوا افواہوں کے سبب ممبئی کی سڑکیں ویران رہیں اور اسکول وکالج بند رہے۔ موصولہ اطلاع کے مطابق اورنگ آباد شہر میں بند کا سب سے زیادہ اثر پڑا ہے اور ریاست بھر میں پولیس کا سخت بندوبست رکھا گیا ہے کیونکہ گذشتہ ماہ ہونے والے احتجاج نے تشدد کی شکل اختیار کرلی تھی۔

حالانکہ مراٹھا کرانتی مورچہ نے ممبئی، تھانے اور نوی ممبئی کو احتجاج سے مستثنی رکھا تھا، لیکن افواہوں کی وجہ سے پہلے ہی اسکولوں اورکالجوں میں تعطیل کااعلان کردیا گیا تھا جوکہ جو تعلیمی ادارہ کھلے تھے، وہاں اساتذہ اور طلبا ء کی حاضری کم رہی۔ پونے میں چاندی چوک علاقے میں مظاہرین نے توڑ پھوڑ کی، جبکہ کلکٹر آفس میں زبردستی گھس کر توڑ پھوڑ کی گئی اور کوتروڈ علاقہ میں کئی موٹرگاڑیوں کوآگ لگادی گئی۔ اورنگ آباد میں ریل روکو کیا گیا۔اس کی وجہ سے ٹرینوں کوکئی گھنٹے کی تاخیر سے روانہ کیا گیا۔

مہاراشٹر میں مراٹھا ریزرویشن احتجاج کے دوران بند اور تشدد سے زندگی متاثر

مہاراشٹر میں مراٹھا ریزرویشن احتجاج کے دوران بند اور تشدد سے زندگی متاثر

ریاست کی کئی تنظیموں کی اپیل کے باوجود ریاست کے کئی شہروں میں تشدد کی خبریں موصول ہورہی ہیں۔مہاراشٹر میں مراٹھا کرانتی مورچہ اور سکالا مراٹھا سماج نے ہدایات جاری کیں، لیکن اس کے باوجود تشدد کا سلسلہ جاری رہا۔ ممبئی ، تھانے اور نوی ممبئی میں مظاہرین نے ٹرینوں کو علامتی طور پر روکنے کی کوشش کی اور سینٹرل اور ویسٹرن ریلویز کی خدمات معمول کے مطابق چلتی رہیں۔ پونے ، ناگپور، ناندیڑ اور دیگر علاقوں میں پٹریوں پر بیٹھ کر ریل روکو کیا گیا ۔

مہاراشٹر اسٹیٹ روڈ ٹرانسپورٹ کارپوریشن کی بسی احتیاطا سڑکوں سے غائب رہیں۔ مراٹھواڑہ کے ساتھ ساتھ ودربھ اورکوکن خطہ میں بھی احتجاج نے تشدد کی شکل اختیار کرلی ہے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز