مولانا آزاد اقلیتی مالیاتی کارپوریشن کے تین سالوں کے ساڑھے چار کروڑ روپے میں محض 50 کروڑ تقسیم

اقلیتوں کے معاشی مسائل کو حل کرنے کے لئے مہاراشٹر میں ریاستی حکومت کی جانب سے مولانا آزاد مالیاتی کارپوریشن قائم کیا گیا ہے۔

Dec 21, 2017 11:09 PM IST | Updated on: Dec 21, 2017 11:09 PM IST

ناندیڑ : اقلیتوں کے معاشی مسائل کو حل کرنے کے لئے مہاراشٹر میں ریاستی حکومت کی جانب سے مولانا آزاد مالیاتی کارپوریشن قائم کیا گیا ہے۔ لیکن موجودہ بی جے پی حکومت مولانا آزاد مالیاتی کارپوریشن کے مختص بجٹ کو خرچ نہیں کررہی ہے ۔اس سلسلہ میں کانگریس کے اقلیتی سیل کی جانب سے حاصل کی گئی معلومات میں اس بات کا انکشاف ہوا ہے کہ مولانا آزاد مالیاتی کاپوریشن کا سالانہ بجٹ دیڑھ سو کروڑ روپے مقرر کیا گیا ہے ۔ پچھلے تین سالوں میں ساڑھے چار سو کروڑ روپے خرچ ہونے چاہئے تھے۔ تاہم محض 50 کروڑ روپے ہی خرچ کئے گئے ہیں ۔ بقیہ چار سو کروڑ کی رقم خرچ کئے بغیر محفوظ رکھی گئی ہے ۔

سینکڑوں بے روزگار اقلیتی نوجوانوں نے مولانا آزاد مالیاتی کارپوریشن سے قرض حاصل کرنے کے لئے درخواستیں جمع کی ہیں ،لیکن انہیں مایوسی کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ اس مسئلہ کی طرف انتظامیہ کی توجہ مبذول کرانے کے لئے کانگریس کے مسلم کارپوریٹروں کے ایک وفد نے ضلع کلکٹر سے بھی ملاقات کی اور قرض جاری کرنے کا مطالبہ کیا ۔ ریاستی حکومت کے نام دئے گئے میمورنڈم میں مطالبہ کیا گیا کہ بے روزگار اقلیتی نوجوانوں کو کاروبار کے لئے پچاس ہزارروپے تک بغیر کسی گارنٹی کے قرض جاری کیا جائے ۔

مولانا آزاد اقلیتی مالیاتی کارپوریشن کے تین سالوں کے ساڑھے چار کروڑ روپے میں محض 50 کروڑ تقسیم

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز