کل جماعتی تنظیم نے اسرائیلی فوج، موب لنچنگ اور سنجے راؤت کے بیان کی مذمت کی

Jul 26, 2017 08:04 PM IST | Updated on: Jul 26, 2017 08:04 PM IST

مالیگاؤں۔ کل جماعتی تنظیم مالیگاؤں کی جانب سے ایڈیشنل کلکٹر کے ذریعے ملک کے صدر جمہوریہ، وزیر اعظم اور وزیر دفاع کو تین نکاتی میمورنڈم روانہ کیا گیا ۔ میمورنڈم کے ذریعے قبلہ اول مسجد اقصیٰ میں نماز جمعہ ادا کرنے سے روکنے اور مسلمانوں پر ظلم ڈھانے والے اسرائیلی حکومت اور فوج کی مذمت کی گئی ۔ دوسرا ملک میں گئو رکشا کے نام پر بھیڑ کے ذریعے ہورہے حملوں کو فوراً روکنے کا مطالبہ حکومت ہند سے کیا گیا ۔ وہیں امرناتھ یاترا کے دوران ہوئے حملے کے بعد حج کے سفر کو لیکر شیو سینا کے بیان کی پرزور الفاظ میں مذمت کی گئی ۔ حکومت سے کہا گیا کہ اگر حاجیوں اور عام عوام کی حفاظت نہیں کی گئی تو جلد ہی تحریک کا اعلان کیا جائیگا ۔

 اس کل جماعتی تنظیم میں سبھی مکاتب فکر کے علما کرام اور دانشوران شامل ہیں ۔ اس تنظیم کے سبھی ممبران نے شہر کے ایڈشینل کلکٹر کے دفتر پر پہنچ کر میمورنڈم دیا ۔ اس میمورنڈم میں یہ مطالبہ کیا گیا ہے کہ اسرائیلی فوج نے  مسلمانوں کے مسجد اقصیٰ میں جمعہ کی نماز ادا کرنے سے  جو روک لگائی ہےاس کو فوراً ہٹائے۔ ہندوستانی حکومت ہمارے جذبات اسرائیلی حکومت تک پہنچائے اور انصاف کے لئے ہمارا ساتھ دے ۔ اسی طرح گئو رکشکوں کے ذریعے جو حملے ہورہے ہیں اسے روکا جائے  وہیں حاجیوں کے سفر کے بارے میں شیو سینا کے ممبر آف پارلیمنٹ سنجئے راوت کے بیان پر سخت اعتراض ظاہر کرتے ہوئے حکومت ہند اور خاص طور سے ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا کہ سفر حج پر روانہ ہونے والے حاجیوں کی حفاظت پر خصوصی دھیان دیا جائے ۔

کل جماعتی تنظیم نے اسرائیلی فوج، موب لنچنگ اور سنجے راؤت کے بیان کی مذمت کی

ری کمنڈیڈ اسٹوریز