اب لوجہاد کے نام پرراجستھان میں مسلم نوجوان کا کلہاڑی سے کاٹ کر قتل ، زندہ جلایا ، ملزم شنبھولال گرفتار

Dec 07, 2017 02:33 PM IST | Updated on: Dec 07, 2017 02:33 PM IST

جے پور : راجستھان کے اودے پور میں اب لو جہاد کے نام پر ایک مسلم نوجوان کا بے رحمی سے قتل اور پھر اس کو زندہ جلانے کا سنسنی خیز واقعہ سامنے آیا ہے ، جس کی وجہ سے علاقہ کے مسلمانوں میں شدید بے چینی پھیل گئی ہے اور ماحول کشیدہ ہوگیا ہے۔ یہی نے اس گھنونی کرتوت کا ویڈیو بھی بنایا گیا اور پھر وہ ویڈیو وائرل بھی ہوگئی ہے۔ ویڈیو میں ایک شخص دوسرے شخص پر پہلے تو کلہاڑی سے وار کرتا ہوا نظر آتا ہے اور پھر اس کو زندہ جلا دیتا ہے۔ مقتول شخص کی شناخت محمد افرزل کی طور پر کی گئی ہے۔  افرزل مغربی بنگال کے مالدہ کا رہنے والا تھا اور وہ یہاں آر سی سی کا کام کرتا تھا۔

ویڈیو میں ایک شخص یہ دھمکی بھی دیتا ہوا نظر آرہا ہے کہ لو جہاد کرنے والوں کا یہی حشر ہوگا ۔ پولیس نے نصف جلی لاش کو اپنی تحویل میں لے کر جانچ شروع کردی ہے اور اس سلسلہ میں ایک شخص کو گرفتار بھی کیا گیا ہے ، جس سے پوچھ گچھ کی جارہی ہے ۔ گرفتار شخص کا نام شنبھو لال ریگر ہے ۔

اب لوجہاد کے نام پرراجستھان میں مسلم نوجوان کا کلہاڑی سے کاٹ کر قتل ، زندہ جلایا ، ملزم شنبھولال گرفتار

انتہائی بری حالات میں ملی لاش

یہ پورا واقعہ راج نگر تھانہ کے کوتوالی کے سو فیٹ روذ کے پاس دیو ہیریٹیج روڈ پر پیش آیا ۔ پہلے تو یہاں پولیس کو صرف ایک نوجوان کی آدھی جلی ہوئی لاش کی اطلاع ملی تھی ، جس پر ایس پی منوج کمار ، اے ایس پی منیش ترپاٹھی ، ڈی ایس پی راجنیدر سنگھ سمیت راج نگر پولیس اہلکار جائے واقع پر پہنچے تو انہوں نے ایک کھیت میں کچے راستے میں بری حالات میں ایک لاش دیکھی ۔

قتل کرکے لاش کو جلانے کی کوشش کی گئی

جائے واقعہ کو دیکھنے سے یہ بات صاف ظاہر ہورہی تھی کہ یہ قتل کرکے لاش کو جلانے کی کوشش کی گئی ہے ، جس پر سینئر افسروں کی ہدایت پر ایف ایس ایل ٹیم ، ڈاگ اسکواڈ اور ایم او بی ٹیم کو وہاں بلایا گیا ۔ پولیس نے مقتول شخص کی شناخت کیلئے آس پاس کے لوگوں کو بلایا ، جس کے بعد اس کی شناخت محمد افرزل کے طور پر کی گئی ۔ اب پولیس اس کے شناخت کی تصدیق کررہی ہے۔

rajasthan-murder-viral_3

تو ہر ہندوستانی کا یہی ہوگا انجام

قتل اور لاش جلانے کی وائرل ہوئی ویڈیو ملزم شنبھو ایک بھٹا شیخ کو قتل کرکے اس کی لاش کو جلاتے ہوئے نظر آتا ہے ۔ ویڈیو کلب میں شبنبھو لال دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ اگر لو جہاد ختم نہیں ہوا تو ہر ہندوستانی کا اسی طرح کی بھیانک صورتحال کا سامنا کرنا پڑے گی ۔ ویڈیو میں ایک اسکوٹی اور ایک بائیک بھی نظر آتی ہے ۔ جس طرح یہ ویڈیو شوٹ کیا گیا ہے ، اس سے صاف ظاہر ہے کہ کوئی تیسرا شخص بھی وہاں موجود تھا ۔ پولیس فی الحال ویڈیو کی جانچ کررہی ہے۔

ریاست کے وزیر داخلہ گلاب چند کٹاریا ریاست کے وزیر داخلہ گلاب چند کٹاریا

معاملہ کی جانچ کیلئے ایس آئی ٹی کی تشکیل

ریاست کے وزیر داخلہ گلاب چند کٹاریا نے اس معاملہ کی جانچ کیلئے ایک ایس آئی ٹی کی تشکیل کی ہے ۔ کٹاریا نے کہا کہ انہوں نے کبھی ایسا واقعہ نہیں دیکھا ، جہاں قتل کو ریکارڈ کیا جارہا ہو ، انہوں نے کہا کہ ایس آئی ٹی کی تشکیل کردی گئی ہے اور پولیس ہیڈ کوارٹر میں اس کی مانیٹرنگ کی جارہی ہے۔

چوبیس گھنٹوں کیلئے انٹرنیٹ خدمات بند

ادھر پورے معاملہ کی نگرانی کررہے آئی جی آنند شریواستو کے مطابق پورے علاقہ میں 24 گھنٹوں کیلئے انٹرنیٹ خدمات بند کردی گئی ہیں۔ ملزموں کی گرفتار کو لے کر اعلی افسران سمیت تین اضلاع کی پولیس تعینات کی گئی تھی اور رات بھر پولیس کی ٹیمیں دبش دیتی رہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز