ملن ویلفیئر سوسائٹی کی جانب سے ناندیڑ میں اجتماعی شادیوں کا اہتمام

May 22, 2017 05:17 PM IST | Updated on: May 22, 2017 05:17 PM IST

ناندیڑ۔ کسی اچھے کام کو کرنے کیلئے محض ارادہ  ہی کافی نہیں ہوتا بلکہ اس ارادے کو عملی جامہ پہنچانے کے لئے سماج کے چند افراد کو آگے بھی آنا پڑتا ہے اور اپنے مال اور وقت کی قربانی دینی پڑتی ہے ۔ ایسی ہی ایک مثال ان دنوں ناندیڑ کے ملن ویلفیئر سوسائٹی نے پیش کی ہے ۔ ملن ویلفیئر سوسائٹی کے ذمہ داران نے سماج سے جہیز کی لعنت کو ختم کرنے کے لیے اجتماعی شادیاں کرنے کا فیصلہ لیا جو پندرہ سال سے جاری ہے۔ اجتماعی شادیوں کی  ایک پروقار تقریب کا انعقاد ملن ویلفیئر سوسائٹی نے کیا ۔ شادی کے مسئلہ کولیکر غریب والدین کی پریشانیوں کو کم کرنے کے لیے یہ کام کیا جارہا ہے ۔ پچھلے پندرہ سالوں سے اس طرح کی تقریبات منعقد کی جا رہی ہیں جواپنے آپ میں ایک مثال بن گئی ہیں ۔ آج بھی اس تقریب میں 17جوڑوں کو رشتہ ازدواج میں منسلک کیا گیا ۔ ملن ویلفیئرسوسائٹی نے سارے انتظامات کیے ۔ اس کے لیے شہر کے مخیر حضرات نے بھی مالی تعاون دیا ۔

ملن ویلفیئر سوسائٹی نے نہ صرف نکاح کی مجلس سجائی بلکہ تقریب میں حصہ لینے والے دولہا و اور دلہن کو نئی زندگی آغاز کرنے کے لیے درکار امور خانہ داری کی تمام چیزیں بھی فراہم کیں ۔ اجتماعی نکاح کی یہ تقریب غریب طبقہ کےعام لوگوں کے علاوہ خاص طورپر ان بچیوں کے لیےنعمت بن گئی، جن کے والدین اب اس دنیا میں نہیں ہیں اور وہ یتیمی کی حالت میں زندگی گذار رہی ہیں ۔ کمیٹی کے ذمہ داران نے اپنے جائزہ میں پایا کہ شادیوں میں جہیز کے نام پر ہونے والی لوٹ کے سبب کئی مسائل جنم لیتے ہیں ۔

ملن ویلفیئر سوسائٹی کی جانب سے ناندیڑ میں اجتماعی شادیوں کا اہتمام

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز