مودی حکومت میں ہجومی تشدد کا بول بالا ، بقر عید کے موقع پر مسلمانوں میں ڈر اور خوف کا ماحول

Aug 28, 2017 06:45 PM IST | Updated on: Aug 28, 2017 06:45 PM IST

ممبئی : مرکز کا اقتدار حاصل کرنے کیلئے وزیر اعظم نریندر مودی نے اچھے دن کا سبز باغ دکھایا اور اچھے دنوں کا پھل انہوں نے کبھی اترپردیش میں معصوم بچوں کی جان جانے سے دیا تو کئی مرتبہ ریلوے حادثات میں لوگوں کی جان چلی گئی۔ ابھی بقر عید قریب ہے ایسے میں بھی شرپسند اپنے جنون کی حالت میں ہیں حالات یہ ہیں کہ اس وقت دیگر ریاستوں سے لوگ بھینس اور بکرے لانے سے بھی ڈر رہے ہیں جس طرح سے مودی حکومت میں ہجومی تشدد ہو رہا ہے اور بے قصور لوگ مارے جا رہے ہیں یا پھر تشدد کا نشانہ بنائے جا رہے ہیں ایسا آزادی کے بعد سے پہلے کبھی نہیں دیکھا گیا۔ مودی حکومت میں تشدد کے ویڈیو وائرل ہوتے ہوئے سوشل میڈیا پر اسے دیکھا جا سکتا ہے لیکن حکومت صرف بیان بازی کرتی ہے اسے عوام سے کچھ لینا دینا نہیں ہے ۔

ان خیالات کا اظہار مہاراشٹر کانگریس کے سکریٹری سید ذیشان احمد نے ابھی حالیہ آنے والی بقر عید کے موقع پر لوگوں میں جو ڈر اور خوف بیٹھا ہے اسے دیکھتے ہوئے کہا کہ حالات کشیدہ ہوتے جا رہے ہیں لیکن مرکز کی نریندر مودی حکومت یا ریاست کی فڑنویس حکومت کو عوام کے بیچ کی کشیدگی سے کچھ لینا دینا نہیں ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ مظفر نگر کے قریب ٹرین حاثہ میں25سے زائد لوگوں کی جان چلی گئی اور بیشمار لوگ زخمی ہو گئے۔انہوں نے سوالیہ انداز میں کہا کہ انسانی قدروں کی اہمیت بھی مودی حکومت کے وزرا کے اندر سے چلی گئی ہے۔ ٰ60سے زائد معصوم بچے آکسیجن نہ ملنے کی وجہ سے موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں اور یوگی حکومت میں شامل آنجہانی لال بہادر شاستری کے پوتے اس پر بھی حساس نہ ہوتے ہوئے بے قدروں والا بیان دیتے ہیں وہیں وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے تو بیان دینا بھی گوارہ نہیں کیا۔

مودی حکومت میں ہجومی تشدد کا بول بالا ، بقر عید کے موقع پر مسلمانوں میں ڈر اور خوف کا ماحول

اخبارات کو جاری اپنے بیان میں سید ذیشان احمد نے کہا کہ مرکزی حکومت اور سبھی بی جے پی اقتدار والی حکومتوں میں سرکاری عملہ مجرمانہ غفلت اور لاپرواہی کا مظاہرہ کر رہا ہے گورکھپور سانحہ کو معصوم بچوں کا اجتماعی قتل عام کہا جا سکتا ہے وہیں مظفر نگر کے قریب میں ٹرین حادثہ ہوا ہے وہ ریلوے عملہ کے کرپشن اور نااہلی کا جیتا جاگتا ثبوت ہے۔ سید ذیشان احمد نے مطالبہ کیا کہ اترپردیش ہی نہیں پورے ملک کے تمام اسپتالوں میں ڈاکٹروں کی موجودگی اور غریب لوگوں کو علاج کی فراہمی بہتر بنائی جائے اسی طرح ریلوے حادثات کو روکنے کے لئے ضروری اقدامات کیئے جائیں۔

انہوں نے کہا کہ مودی حکومت صرف اعلانات کر رہی ہے لیکن غور سے دیکھنے کی ضرورت ہے کہ آخر ہو کیا رہا ہے ؟۔ انہوں نے مزید کہا کہ ضرورت اس بات کی ہے کہ آپسی بھائی چارہ کو بڑھایا جائے جس کیلئے مہاراشٹر کانگریس کے صدر و رکن پارلیمنٹ اشوک چوہان پوری ریاست میں جا کر لوگوں کے درمیان آپسی بھائی چارہ کے بڑھاوا کیلئے کام کر رہے ہیں مزید یہ کہ اشوک چوان رکن پارلیمنٹ ہونے کے باوجود وہ ریاست کے کسانوں کے مسئلہ میں بھی سب سے آگے پیش پیش رہے اور کسانوں کے قرض معافی میں انہوں نے اہم رول نبھایا۔سید ذیشان احمد نے مزید کہا کہ2019میں کانگریس پارٹی راہل گاندھی کی قیادت میں لوک سبھا کاا لیکشن لڑیں گے جس کیلئے مہاراشٹر کے صدر و رکن پارلیمنٹ اشوک چوان کے علاوہ پارٹی کے سبھی سینئر لیڈران کی حمایت انہیں حاصل ہے اور مرکز کی بدعنوان حکومت کو اکھاڑ پھینکنے کاکام کانگریس کرے گی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز