تین طلاق پر قانون کا مقصد کسی کو پریشان کرنا نہیں ، بلکہ خواتین کے سماجی تحفظ کو یقینی بنانا ہے : نقوی

اقلیتی امور کے وزیر مختار عباس نقوی نے کہا ہے کہ تین طلاق پر قانون کسی کو پریشان کرنے کے لئے نہیں ہے۔

Dec 17, 2017 03:59 PM IST | Updated on: Dec 17, 2017 03:59 PM IST

كشن گڑھ باس: اقلیتی امور کے وزیر مختار عباس نقوی نے کہا ہے کہ تین طلاق پر قانون کسی کو پریشان کرنے کے لئے نہیں ہے۔ مختار عباس نقوی راجستھان کے ضلع الور میں كشن گڑھ باس میں ساڑھے گیارہ ہزار کروڑ روپے کےچھ ترقیاتی منصوبوں کا سنگ بنیاد رکھنے کے موقع پر لوگوں سے خطاب کر رہے تھے۔

مرکزی وزیر نے کہا کہ تین طلاق کو قابل سزا جرم بنانے والا مجوزہ بل کسی کو پریشان کرنے کے لئے نہیں لایا جا رہا ہے بلکہ اس کا مقصد مسلم خواتین کو آئینی حق دلانے اور ان کے سماجی تحفظ کو یقینی بنانا ہے۔ انهوں نے تین طلاق کو بڑی سماجی ظلم بتاتے ہوئے کہا کہ اس سے بہت طرح کے مسائل پیدا ہوتے ہیں جنہیں دور کرنا ضروری ہے۔

تین طلاق پر قانون کا مقصد کسی کو پریشان کرنا نہیں ، بلکہ خواتین کے سماجی تحفظ کو یقینی بنانا ہے : نقوی

بی جے پی کے سینئر لیڈر اور مرکزی وزیر مختار عباس نقوی: فائل فوٹو۔

خیال رہے کہ مرکزی کابینہ نے وزیر اعظم نریندر مودی کی صدارت میں جمعہ کو منعقدہ میٹنگ میں تین طلاق کو قابل سزا جرم قرار دینے والے بل کو منظوری دے دی۔بل کو پارلیمنٹ کے جاری سرمائی اجلاس کے دوران پیش کئے جانے کا امکان ہے ۔ تاہم مسلم تنظیمیں اس بل کی شدید مخالفت کررہی ہیں ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز