اب ناگپور میں گئو رکشکوں کی غنڈہ گردی: بیف لے جانے کے شبہ میں سلیم اسماعیل شاہ کی کردی پٹائی

Jul 13, 2017 11:29 AM IST | Updated on: Jul 13, 2017 11:41 AM IST

ناگپور۔ مہاراشٹر کے ناگپور میں ایک آدمی کو اپنی اسکوٹی کی ڈگی میں بیف لے جانے کے الزام میں کچھ لوگوں نے بری طرح پیٹ دیا۔ واقعہ اس وقت ہوا جب سلیم اسماعیل شاہ نام کا آدمی اپنی اسکوٹی سے جا رہا تھا۔ ایک بس اسٹاپ کے قریب کچھ لوگوں نے اسے روکا اور گائے کا گوشت لے جانے کا الزام لگاتے ہوئے اس کی پٹائی کر دی۔ ناگپور ضلع کے بھارسنگی گاؤں میں بدھ کی صبح ایكٹوا کی ڈگی میں گوشت لے جانے والے سلیم اسماعیل شاہ پاس کے ہی كاٹول گاؤں کا رہنے والا ہے۔ صبح وہ اپنی ایكٹوا سے بھارسنگی گاؤں سے گزر رہا تھا۔

بھارسنگی بس اسٹاپ کے سامنے اچانک کچھ لوگوں نے انہیں پکڑ لیا اور پٹائی کرتے ہوئے گائے کاٹ کر اس کا گوشت ڈگی میں لے جانے کا الزام لگایا۔ سلیم چلاتے رہے کہ یہ بیف نہیں ہے اور میں نے گائے نہیں کاٹی۔ لیکن پھر بھی بھیڑ انہیں پیٹتی رہی۔

اب ناگپور میں گئو رکشکوں کی غنڈہ گردی: بیف لے جانے کے شبہ میں سلیم اسماعیل شاہ کی کردی پٹائی

پولیس نے چھڑایا

واقعہ کی معلومات ملنے پر موقع پر پہنچی پولیس نے اسے بھیڑ سے چھڑایا۔ پولیس نے مار پیٹ کا معاملہ درج کر 4 نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کیا ہے۔ تاہم، ابھی تک کسی کی گرفتاری نہیں ہوئی ہے۔ ایكٹوا کی ڈگی سے ملے گوشت کو ضبط کر پولیس نے تحقیقات کے لئے لیبارٹری میں بھجوا دیا ہے۔

وزیر اعظم نے کی تھی اپیل

بتا دیں کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے کچھ دن پہلے گجرات سے اپیل کی تھی کہ گئو رکشا کے نام پر داداگیری اور کسی سے مار پیٹ نہ کی جائے۔ اس کے باوجود گئو رکشا کے نام پر قانون اپنے ہاتھ میں لینے کی اور گوشت کی تجارت كرنےوالوں کو پیٹنے کے واقعات مسلسل سامنے آ رہے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز