گجرات میں اسمبلی انتخابات کو لے کر سیاسی سرگرمیاں تیز، مسلم تنظیموں کی ظالموں کا ساتھ نہ دینے کی اپیل

Oct 27, 2017 05:40 PM IST | Updated on: Oct 27, 2017 05:40 PM IST

احمد آباد :گجرات میں اسمبلی انتخابات کے لئے تاریخوں کا اعلان ہو چکا ہے ۔ دو مرحلے میں ہونے والے الیکشن کو لے کر جہاں ایک طرف سیاسی پارٹیاں تیاریوں میں مصروف ہوگئی ہیں ۔ وہیں دوسری طرف اچھی سرکار بنانے کے لئے مسلم تنظیموں سے وابستہ افراد بھی حرکت میں آ گئے ہیں اور لوگوں میں بیداری پیدا کرنے کے لئےکام کررہے ہیں ۔ گجرات انتخابات کو لےکرجمعیت علماء ہند گجرات یونٹ کے جنرل سکریٹری مفتی عبدالقیوم نے کہا ہے کہ جمعیت علماء ہند کوئی سیاسی تنظیم نہیں ہے ، لیکن ہم سیاست سے بالکل انجان رہے، ایسا بھی نہیں ہے ۔

انہوں نے کہا کہ ہم ایسا نہیں کہتے کہ مسلم امیدوار کو الیکشن کے میدان میں اتارا جائے ۔ اگر ہم ایسا مطالبہ کرتے ہیں ، تو دوسری پارٹیاں اور ہمارے درمیان کوئی فرق ہی نہیں بچتا ۔ انہوں نے کہا کہ ہم لوگوں سے اپیل کرتے ہیں کہ شریعت کے اعتبار سے امیدواروں کو منتخب کیا جائے ۔ انہوں نے حدیث کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ظالم کا ساتھ نہ دیا جائے۔

گجرات میں اسمبلی انتخابات کو لے کر سیاسی سرگرمیاں تیز، مسلم تنظیموں کی ظالموں کا ساتھ نہ دینے کی اپیل

کانگریس مسلمانوں کا استعمال کر رہی ہے، اس سوال کا جواب دیتے ہوئے مفتی عبدالقیوم نے کہا کہ ہم کانگریس کا دفاع نہیں کر رہے ہیں ، لیکن اگر کانگریس کو مسلمان ووٹ نہیں دیتے تو پھر مسلمانوں کے پاس دوسرا آپشن کیا ہے ؟ ۔ انہوں نے مسلم برادری کے لوگوں سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ زیادہ سے زیادہ لوگ اپنے ووٹ کا استعمال کریں ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز