بی جے پی وزیر اعلی منوہر پاریکر کی اسمبلی میں یقین دہانی ، گوا میں نہیں ہونے دیں گے بیف کی کمی

Jul 18, 2017 07:24 PM IST | Updated on: Jul 18, 2017 07:24 PM IST

گوا : گوا کے وزیر اعلی منوہر پاریکر نے منگل کو کہا کہ وہ ریاست میں بیف کی کمی نہیں ہونے دیں گے اور اس سے نمٹنے کے لئے حکومت نے کرناٹک سے اسے درآمد کرنے کا آپشن کھلا رکھا ہے۔ پاریکر نے گوا اسمبلی میں کہا کہ ہم نے بیلگام سے بیف درآمد کرنے کا آپش بند نہیں کیا ہے، تاکہ اس بات کو یقینی بنایا جاسکے کہ یہاں کوئی کمی نہیں ہو۔

پاریکر نے یہ جواب بی جے پی ممبر اسمبلی نيلیش كبرال کے ایک سوال کے جواب میں دیا ۔ انہوں نے کہا کہ میں آپ کو یقین دلاسکتا ہوں کہ پڑوسی ریاست سے آنے والے بیف کی جانچ مناسب طریقے سے اور مجاز ڈاکٹر کی طرف سے کی جائے گی۔ پاریکر نے یہ بھی کہا کہ یہاں سے تقریبا 40 کلومیٹر دور پونڈا میں واقع گوا بیف کمپلیکس میں ریاست کے واحد قانونی مذبح سے روزانہ تقریبا 2000 کلو گرام بیف باہر آتا ہے۔

بی جے پی وزیر اعلی منوہر پاریکر کی اسمبلی میں یقین دہانی ، گوا میں نہیں ہونے دیں گے بیف کی کمی

انہوں نے کہا کہ باقی بیف کی فراہمی کرناٹک سے ہوتی ہے۔ حکومت کی گوا بیف کمپلیکس میں ذبح کے لئے پڑوسی ریاستوں سے جانوروں کو لائے جانے پر روک لگانے کی کوئی منشا نہیں ہے۔ ریاست کی سیاحت والے علاقوں میں اور اقلیتی کمیونٹی میں بیف کھایا جاتا ہے، جو ریاست کی کل آبادی میں سے 30 فیصد سے زیادہ ہیں۔

ادھر کانگریس لیڈر راجیو شکلا نے سابق وزیر دفاع کے اس بیان پر چٹکی لی ہے۔ شکلا نے کہا کہ گوا کے بی جے پی وزیر اعلی کہہ رہے ہیں کہ وہ ریاست میں بیف کی کمی نہیں ہونے دیں گے، یہ انتہائی مضحکہ خیز ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز