نریندر مودی ایک مہینہ کے اندر تیسری بار پہنچے گجرات، جانیں کیا ہے منصوبہ

Oct 07, 2017 11:49 AM IST | Updated on: Oct 07, 2017 11:49 AM IST

جام نگر۔ وزیراعظم نریندر مودی ایک مہینہ کے اندر اپنی آبائی ریاست گجرات کے تیسرے دورہ پر آج یہاں پہنچ گئے۔ اپنے اس دو روزہ دورہ کے دوران کل وہ بطور وزیراعظم پہلی بار اپنے آبائی گاوں وڈنگر بھی جائیں گے اور اس کے لئے پورے شہر کو سجایا گیا ہے۔ وڈنگر ریلوے اسٹیشن کے نزدیک اس درخت کو بھی سجا یا گیا ہے جہاں وہ بچپن میں چائے بیچتے تھے۔ اس کے علاوہ جگہ جگہ ان کے بچپن اور نوعمری سے وابستہ تصویروں اور واقعات والے ہورڈنگس بھی لگائے گئے ہیں۔

مسٹر مودی فضائیہ کے خصوصی طیارہ سے آج صبح جام نگر ہوائی اڈہ پر پہنچے جہاں وزیراعلی وجے روپانی، نائب وزیراعلی نتن پٹیل، سابق وزیراعلی آنندی بین پٹیل، اور چیف سکریٹری جے این سنگھ نے ان کا استقبال کیا۔ گجرات میں اس برس اسمبلی انتخابات ہونے ہیں اور مسٹر مودی کا یہ کل ملاکر ریاست کا ساتواں دورہ ہے جبکہ وزیراعظم بننے کے بعد مجموعی طورپر یہ ان کا 17واں دورہ ہے۔ مئی 2014میں یہ عہدہ سنبھالنے کے بعد وہ پہلی بار اپنے گاوں جائیں گے۔

نریندر مودی ایک مہینہ کے اندر تیسری بار پہنچے گجرات، جانیں کیا ہے منصوبہ

ہفتہ کے روز گجرات کے جام نگر میں وزیر اعظم نریندر مودی کی آمد پر ریاست کے وزیر اعلیٰ وجے روپانی ان کا خیر مقدم کرتے ہوئے۔ تصویر، یو این آئی۔

مسٹر مودی، جنہوں نے پچھلے مہینہ بھی دو مرتبہ گجرات کا دورہ کیا تھا، اس بار بھی مختلف پروجیکٹوں کا ’بھومی پوجن‘، آغاز یا افتتاح بھی کریں گے۔ اس میں ان کے آبائی گاوں وڈنگر میں ایک میڈیکل کالج اور اسپتال کے افتتاح کا کام بھی شامل ہوگا۔ اس کے علاوہ خاص طورپر وہ 2500کروڑ کی لاگت والے راجکوٹ بین الاقوامی ہوائی اڈہ پروجیکٹ اور اوکھا۔بیٹ دوارکاپل کا بھومی پوجن اور نرمدا پر بنے ایک بیراج اور امو ل سے منسلک ایک ڈیری پلانٹ کا افتتاح بھی کریں گے۔

مسٹر مودی فضائیہ کے خصوصی طیارہ سے آج صبح جام نگر ہوائی اڈہ پر پہنچے مسٹر مودی فضائیہ کے خصوصی طیارہ سے آج صبح جام نگر ہوائی اڈہ پر پہنچے

مسٹر مودی جام نگر ہوائی اڈہ سے ہیلی کاپٹر کے ذریعہ دوار کا روانہ ہوگئے جہاں جگت مندر میں بھگوان دوارکادھیش کی پوجا سے اپنے دورہ کی شروعات کریں گے۔ سمندر کے درمیان میں واقع بیٹ دوارکا کو اوکھا سے جوڑنے والے 3.92کلومیٹر لمبے اور 962کروڑ روپے کی لاگت والے کیبل پل کا سنگ بنیاد رکھیں گے۔اہم تیرتھ شہر دوار کا آنے والے لاتعداد تیرتھ یاتری اب تک بیٹ دوارکا جانے کے واحد ذریعہ کے طورپر سمندر میں کشتی کا استعمال کرتے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز