مالیگاؤں : ڈمپنگ گراؤنڈ پر پروسیس پلانٹ شروع، برسوں سے کیا جارہا تھا مطالبہ

Jan 06, 2017 07:03 PM IST | Updated on: Jan 06, 2017 07:03 PM IST

مالیگاؤں: مالیگاؤں شہر کا ڈمپنگ گراؤنڈ پر جو چالیس ایکڑ سے زائد کی زمین پر محیط ہے، طویل عرصہ کے مطالبہ کے بعد پروسیس پلانٹ شروع کیا گیا ہے۔ کارپوریشن کی جانب سے گزشتہ 25 سالوں سے اس ڈمپنگ گراؤنڈ میں صرف کچرا ڈالنے کا کام کیا گیا تھا ، جس کی وجہ سے یہاں کچرا 6 لاکھ کیوبک میٹر تک پہنچ گیا ہے۔اس تعلق سے ایک سماجی تنظیم نے گرین ٹریبونل میں شکایت درج کرائی تھی، جس کے بعد گرین ٹربیونل کے حکم پر کارپوریشن کے خلاف مہاراشٹر محکمہ فضائی آلودگی نے فوجداری کا معاملہ درج کیا تھا ۔معاملہ درج ہونے کے بعد اب کارپوریشن کے افسران نے آناً فاناً میں کارروائی سے بچنے کیلئے اس ڈمپنگ گرائونڈ پر ایک پروسیس یونٹ کا افتتاح کردیا ہے ۔

خیال رہے کہ مالیگاؤں شہر کی آبادی پانچ لاکھ سے زائد ہے ۔ پورے شہر سے روزانہ تقریباً دولاکھ کلو کچرا اٹھایا جاتا ہے ۔ شہر کے مالدہ شیوار میں واقع کارپوریشن کےڈمپنگ گراؤنڈ پر گزشتہ 25 سالوں سے یہ کچرا جمع کیا جارہا ہے ۔ باربار ملی تنظیموں کے مطالبہ کے بعد بھی کارپوریشن اس کچرے کا پروسیس نہیں کرتی تھی، جس کے بعد شہزاد نامی ایک نوجوان نے اپنی تنظیم کی جانب سے گرین ٹربیونل میں شکایت درج کی ۔ ٹربیونل نے ریاستی حکومت، ضلع کلکٹر اور مالیگاؤں میونسپل کارپوریشن کو نوٹس جاری کیا ۔ اس کے بعد بھی پروسیس کا کام شروع نہ کیے جانے کی وجہ سے محکمہ فضائی آلودگی نے کارپوریشن کے خلاف فوجداری معاملہ درج کرلیا ۔

مالیگاؤں : ڈمپنگ گراؤنڈ پر پروسیس پلانٹ شروع، برسوں سے کیا جارہا تھا مطالبہ

گزشتہ 25 سالوں سے ڈمپنگ گرائونڈ پر 6 لاکھ کیوبک میٹر 12 لاکھ ٹن کچرا جمع ہوگیا ہے ۔ اس کچرے کی وجہ سے مالیگاؤں شہر کے لوگوں کی صحت کو خطرہ لاحق ہورہا ہے۔ قریب سے گزرنے والی گرنا ندی کے پانی میں بھی اس کچرے سے نکلنے والا زہریلا پانی بہہ کر گرنا ڈیم میں جاتا ہے اور وہی پانی مالیگاؤں شہر کو پینے کے لئے دیا جاتا ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز