راہل کا گجرات دورہ: امت شاہ کے بیٹے کے سلسلے میں وزیر اعظم پر اس طرح کیا طنز

Oct 09, 2017 08:57 PM IST | Updated on: Oct 09, 2017 08:57 PM IST

احمد آباد۔ کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی نے آج سے شروع ہونے والے اپنے تین روزہ گجرات دورے کے دوران بی جے پی کے صدر امت شاہ کے بیٹے جے شاہ کی کمپنی کو مبینہ طور پر ہوئے بڑے منافع پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ لگتا ہے کہ یہ وزیر اعظم نریندر مودی کے اسٹارٹ اپ انڈیا منصوبہ کا نمونہ ہے۔ مسٹر گاندھی نے آج سے وسطی گجرات کے کئی اضلاع میں ان دورہ سے متعلق اپنی نوسرجن گجرات یاترا کے دوسرے مرحلے کے دوران نادیاڈ میں ایک جلسہ میں کہا،’’امت شاہ کے بیٹے کی کمپنی نے 16 ہزار گنا منافع حاصل کیا۔ ویسے تو کمپنی بہت پرانی ہے۔ 10 یا 12 سال پرانی ہے مگر منافع دینا 2014 کے بعد شروع ہوا ہے۔ پتہ نہیں، شاید یہ مودی جی کے اسٹارٹ اپ انڈٰیا کا نتیجہ ہے‘‘۔

انہوں نے کہا کہ عجیب سی دنیا ہے مودی جی اسٹارٹ اپ انڈٰیا اور میک ان نڈیا اور کئی منصوبوں کے بارے میں بات کرتے ہیں۔ پھر نوٹ کی منسوخی کے بعد، جی ایس ٹی نافذ کرکے گجرات کے چھوٹے تاجروں اور کسانوں کو برباد کردیتے ہیں اور اسی دوران ایک کمپنی اٹھتی ہے اور یہ امت شاہ کے بیٹے کی کمپنی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مسٹر مودی نے کہا تھا کہ وہ وزیراعظم نہیں بلکہ ایک چوکیدار ہیں۔ تو اب یہ چوکیدار کہاں چلا گیا؟

راہل کا گجرات دورہ: امت شاہ کے بیٹے کے سلسلے میں وزیر اعظم پر اس طرح کیا طنز

کانگریس نائب صدر راہل گاندھی احمد آباد میں ایک عوامی میٹنگ میں شرکت کرتے ہوئے۔

اس سے قبل مسٹر گاندھی نے ٹویٹ کرکے بھی اس معاملے میں مسٹر مودی پر طنز کیا تھا۔ انہوں نے خود کو شہزادہ کہنے کے مسٹر مودی کے طنز پر اس ٹویٹ میں حملہ کیا ہے۔ اپنے ٹویٹ میں، انہوں نے لکھا ’’مودی جی، جے شاہ -’زیادہ‘ کھایا گیا۔ آپ چوکیدار تھے یا شراکت دار ؟ کچھ تو بولئے۔‘‘َ

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز