Live Results Assembly Elections 2018

گجرات میں نریندر مودی اور بی جے پی کو ہرائے گی کانگریس: راہل گاندھی

دیڈیاپاڑا (گجرات)۔ کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی نے آج کہا کہ اس سال گجرات میں ہونے والے اسمبلی الیکشن میں ان کی پارٹی پورے دم خم کے ساتھ لڑے گی اور وزیر اعظم نریندر مودی اور حکمراں بھارتیہ جنتا پارٹی کو ہرا کر دکھائے گی۔

May 01, 2017 09:38 PM IST | Updated on: May 01, 2017 09:38 PM IST

دیڈیاپاڑا (گجرات)۔  کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی نے آج کہا کہ اس سال گجرات میں ہونے والے اسمبلی الیکشن میں ان کی پارٹی پورے دم خم کے ساتھ لڑے گی اور وزیر اعظم نریندر مودی اور حکمراں بھارتیہ جنتا پارٹی کو ہرا کر دکھائے گی۔ کانگریس کی ’نوسرجن گجرات آدی واسی ادھیکاری یاترا‘ کے موقع پر آج ریاست کے نرمدا ضلع کے اس قبائلی اکثریتی علاقے میں منعقد عوامی جلسہ میں مسٹر گاندھی نے کہاکہ اگر کانگریس کی حکومت بنے گی تو یہ کسی ایک شخص کی حکومت نہیں ہوگی۔ انہوں نے اپنی تقریر میں مسلسل مسٹر مودی اور بی جے پر سخت حملے کئے۔ انہوں نے اپنی پارٹی کی انتخابی مہم کی شروعات کرتےہوئے الزام لگایا کہ مسٹر مودی صرف اپنے من کی بات کرتے ہیں اور لوگوں کی سنتے نہیں، جبکہ گجرات میں کانگریس کی حکومت بنے گی تو یہ کسانوں، دلتوں، چھوٹے دکانداروں وغیرہ سبھوں کی بات سنے گی اور اس کے حساب سے کام کرے گی۔

مسٹر گاندھی نے گجرات اور مہاراشٹر کو اس کے یوم تاسیس پر مبارکباد دیتے ہوئے کہاکہ گجرات پورے ملک کیلئے ایک وقار ہے۔ یہاں کے لوگوں میں بہت طاقت ہے۔ مسٹر مودی نے اس کا یکطرفہ فائدہ اٹھایا ہے۔ انہوں نے گجرات کے عوام کو بدلے میں کچھ نہیں دیا۔ ریاست پر آج ان کے قریبی 10 سے 15 لوگوں کا قبضہ ہوگیا ہے۔ حکومت غریبوں کو ان کا واجب حق نہیں دیتی لیکن بڑے صنعتکاروں کو ہزاروں ایکڑ زمین تحفے میں دے دیتی ہے۔

گجرات میں نریندر مودی اور بی جے پی کو ہرائے گی کانگریس: راہل گاندھی

تصویر: اے این آئی: فائل فوٹو

انہوں نے دعوی کیا کہ گجرات کے عوام غصے میں ہیں۔ قبل ازیں مسٹر مودی کی بھرپور حمایت کرنے والے پاٹیدار سماج کے لوگ بھی اپنے بچوں کو مناسب تعلیم نہ ملنے کی شکایت کرتے ہیں اور کہتے ہیں ریاست کے تعلیمی نظام پر بھی مسٹر مودی کے قریبی 10 سے 15 لوگوں کا قبضہ ہوگیا ہے۔ کانگریس کی حکومت آئے گی تو قبائلوں کو ’جل، جنگل، زمین‘ کا حق دلائے گی۔ مسٹر مودی نے تحویل اراضی بل کو ختم کرنے کی سازش کی تھی اور غریب کی مدد کرنے والے منریگا جیسے قانون کا مذاق اڑایا تھا۔ مسٹر مودی بڑی بڑی تقریریں کرتے ہیں لیکن کچھ کرتے نہیں۔

انہوں نے ہرسال دو کروڑ نوجوانوں کو روزگار دلانے کی بات کی تھی لیکن گزشتہ سال ایک لاکھ لوگوں کو ہی روزگار ملا۔ حکومت کے وزیر نے ہی تسلیم کیا ہے کہ ملک میں بے روزگاری کی گزشتہ 60 سال کی سب سے خراب حالت آج ہے۔ اجلاس کو کانگریس صدر سونیا گاندھی کے سیاسی مشیر احمد پٹیل، پارٹی کے ریاستی صدر بھرت سنگھ سولنکی، ریاست کے انچارج اشوک گہلوت، اپوزیشن لیڈر شنکر سنگھ واگھیلا نے بھی خطاب کیا۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز