سومناتھ مندر درشن تنازع : مذہب ذاتی معاملہ ، کسی سے سرٹیفکیٹ لینے کی کوئی ضرورت نہیں : راہل گاندھی

کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی نے سومناتھ مندر میں درشن کے وقت ان کا نام مبینہ طور پر غیر ہندو رجسٹر میں درج کرنے کے بعد ان کے مذہب کو لے کر اٹھے تنازعہ کے درمیان آج کہا کہ ان کی دادی اور دیگر لواحقین شیو بھکت رہے ہیں ۔

Nov 30, 2017 10:13 PM IST | Updated on: Nov 30, 2017 10:13 PM IST

گاندھی نگر: کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی نے سومناتھ مندر میں درشن کے وقت ان کا نام مبینہ طور پر غیر ہندو رجسٹر میں درج کرنے کے بعد ان کے مذہب کو لے کر اٹھے تنازعہ کے درمیان آج کہا کہ ان کی دادی اور دیگر لواحقین شیو بھکت رہے ہیں ۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ وہ مذہب کو ایک ذاتی موضوع مانتے ہیں اور اس کو لے کر ان کو کسی سے سرٹیفکیٹ (سند) لینے کی ضرورت نہیں ہے۔

کانگریس کی کل یا آج ہونے والے ایک اندرونی میٹنگ کی سوشل میڈیا میں وائرل ہوئے ویڈیو میں راہل کو یہ کہتے دیکھے جا سکتے ہیں۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ گجرات میں سردار پٹیل اور نہرو جی کے درمیان دشمنی کی بھی جھوٹی بات پھیلائي جا رہی ہے جبکہ دونوں کچھ نظریاتی اختلافات کے باوجود دوست تھے اور ایک ساتھ جیل میں رہے تھے۔ ان کے پاس ثبوت ہے کہ سردار پٹیل آر ایس ایس کے خلاف تھے۔

سومناتھ مندر درشن تنازع : مذہب ذاتی معاملہ ، کسی سے سرٹیفکیٹ لینے کی کوئی ضرورت نہیں : راہل گاندھی

کانگریس نائب صدر راہل گاندھی کی فائل فوٹو۔ پی ٹی آئی۔

ویڈیوز میں ایک کانگریس لیڈر کو یہ کہتے بھی سنا جا سکتا ہے کہ راہل جی آپ ہر جلسہ میں اپنے مذہب کے بارے میں بتائیے۔ وہ اسے نجی بتاتے ہیں ۔ راہل نے کہا، 'ہم مذہب کوایک نجی معاملہ کے طور پر مانتے ہیں ، ہم اس کا کاروبار یا دلالی نہیں کرنا چاہتے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز