راجستھان ہائی کورٹ نے عارفہ عرف پایل کو اپنے شوہر کے ساتھ رہنے کی دی اجازت

جودھپور۔ راجستھان ہائی کورٹ نے مبینہ لوجہاد کیس میں عارفہ عرف پایل کو اپنی مرضی کے مطابق یعنی شوہر کے ساتھ رہنے کا حکم دیا ۔

Nov 07, 2017 08:37 PM IST | Updated on: Nov 07, 2017 08:37 PM IST

جودھپور۔ راجستھان ہائی کورٹ نے مبینہ لوجہاد کیس میں عارفہ عرف پایل کو اپنی مرضی کے مطابق یعنی شوہر کے ساتھ رہنے کا حکم دیا ۔ جسٹس گوپال کرشنا ویاس اور جسٹس منوج گرگ کی ڈویژن بنچ نے آج یہ حکم دیا۔ اس معاملے میں کل بھی سماعت جاری رہے گی۔ متاثرہ لڑکی کو پہلے ناری نکیتن میں رکھا گيا تھا، جس نے آج عدالت کے حکم کے بعد اپنے سسرال جانے کو پسند کیا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ عدالت نے یکم نومبر کو مذہب تبدیلی کرکے مسلم نوجوان سے نکاح کرنے والی پایل کو سات دن کے لئے ناری نیکتن بھیج دیا تھا۔ عدالت نے حکومت کو اس سلسلے میں کوئی خاص قانون، ضابطہ یا کوئی گائیڈ لائن ہو تو سات نومبر تک پیش کرنے کا بھی حکم دیا تھا۔ پایل کے بھائی اور جودھپور کے پال روڈ کے باشندے ، چراغ سنگھوی نے اس معاملہ میں عرضی دی تھی۔

راجستھان ہائی کورٹ نے عارفہ عرف پایل کو اپنے شوہر کے ساتھ رہنے کی دی اجازت

تصویر: سیاست ڈاٹ کام

دوسری جانب پایل کے والد نے الزام لگایا کہ اس کی بیٹی لو جہاد کا شکار ہوئي ہے اور اسے دبئی میں لے جایا جارہا ہے جہاں اسے فروخت کیا جائے گا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز