ریلائنس کو 8.165 کروڑ روپے کا منافع، اندازوں سے کافی اچھی رہی کارکردگی

Oct 13, 2017 09:27 PM IST | Updated on: Oct 13, 2017 09:27 PM IST

ممبئی۔  پٹرولیم اور مواصلات سمیت مختلف شعبوں میں کاروبار کرنے والی ملک کی سب سے بڑی نجی کمپنی ریلائنس انڈسٹریز لمیٹڈ کا رواں مالی سال کی دوسری سہ ماہی میں 8.165کروڑ روپے کا خالص منافع ہوا ہے جو گزشتہ مالی برس کی اس مدت کے دوران ہوئے منافع کے مقابلہ 12.5فیصد زائد ہے۔ کمپنی نے بورڈ آف ڈائرکٹرز کی میٹنگ کے بعد آج یہاں جاری بیان میں کہا کہ گزشتہ مالی سال کی اس مدت کے دوران اس نے 7,209کروڑ روپے کا فائدہ حاصل کیا تھا۔ ستمبر میں ختم ہوئی سہ ماہی میں کمپنی کا مجموعی کاروبار ایک لاکھ کروڑ روپے کو پار کرتے ہوئے 1,01,169کروڑ روپے پر پہنچ گیا جو 2016-17کی دوسری سہ ماہی کے مجموعی 81.165کروڑ روپے کے مقابلہ میں 23.9فیصد زائد ہے۔

کمپنی نے کہا کہ اس سہ ماہی میں ریفائنری اور پٹرولیم مصنوعات کی برآمد میں 10.2فیصد اضافہ ہوا ہے۔ گزشتہ مالی سال کی دوسری سہ ماہی میں 37,717کروڑ روپے کی برآمدات ہوئی تھی جو رواں مالی سال کی اسی مدت میں بڑھ کر 41,560کروڑ روپے پر پہنچ گئی ہے۔ کمپنی کے مجموعی خرچ میں 35.8فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔ اس نے کہا کہ وائرلیس مواصلات خدمات کا کاروباری آپریشن شروع ہونے اور نیٹ ورک کی توسیع کی وجہ سے خرچ میں اضافہ ہوا ہے۔ ستمبر میں ختم ہوئی سہ ماہی میں 12,323کروڑ روپے کا خرچ ہوا جو گزشتہ مالی برس کی اسی مدت میں 9,073 کروڑ روپے رہا تھا۔

ریلائنس کو 8.165 کروڑ روپے کا منافع، اندازوں سے کافی اچھی رہی کارکردگی

کمپنی نے کہا کہ اس سہ ماہی میں ریفائنری اور پٹرولیم مصنوعات کی برآمد میں 10.2فیصد اضافہ ہوا ہے۔

اس دوران کمپنی کے قرض میں بھی اضافہ درج کیا گیا ہے۔ مارچ 2017میں کمپنی پر مجموعی طورپر 1,96,601کروڑ روپے کا قرض تھا جو ستمبر 2017میں بڑھ کر 2,14,145کروڑ پر پہنچ گیا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز