ناندیڑمیں جماعت اسلامی ہند کی شریعت بیداری مہم کا آغاز

Apr 25, 2017 12:41 PM IST | Updated on: Apr 25, 2017 12:41 PM IST

ناندیڑ۔ بیک وقت تین طلاق کے معاملے میں پھیلائی جا رہی غلط فہمیوں اور اسلام کے عائلی قوانین پر ہورہی تنقیدوں کو دور کرنے کے لئے جماعت اسلامی ہند نے قومی سطح پر شریعت بیداری مہم شروع کی ہے ۔ اس مہم کے تحت ناندیڑ میں ایک جلسہ کا انعقاد کیا گیا ۔ جلسہ میں مرد و خواتین سے خطاب کے دوران مہم کے اغراض و مقاصد کے بارے میں معلومات دی گئی ۔ ملک میں ان دنوں طلاق ثلاثہ معاملے پرزوردار بحث کی جارہی ہے اور سپریم کورٹ بھی اس سلسلہ میں اپنا ایک اہم فیصلہ سنانے جا رہا ہے ۔ ایسے میں مسلم سماج میں شرعی قوانین کو لیکر پائی جانے والی غلط فہمیوں کو دور کرنے اور اسلام کے عائلی قوانین کے بارے میں پھیلائی جارہی غلط فہمیوں کو دورکرنے کے لیے جماعت اسلامی ہند کی جانب سے شریعت بیداری مہم چلائی جا رہی ہے ۔ مہم کے تحت ناندیڑ میں ایک پروگرام  کے دوران جماعت کے ذمہ داران نے مہم کے دوران ہونے والے پروگرام کی تفصیلات بتائی ۔

شریعت بیداری مہم کے دوران مختلف پروگرام کیے جا رہے ہیں ۔انفرادی اور اجتماعی طورپر ملاقاتیں کی جائیں گی اور لوگوں کو شرعی قوانین کے فوائد اور اسکے مختلف پہلوؤں کو سمجھانے کی کوشش کی جائے گی ۔ مرد وخواتین میں یکساں پروگرام کیے جائیں گے ۔ سماج میں پھیل رہی برائیوں اورشرعی قوانین کےغلط استعمال کے نقصانات کی بھی معلومات دی جائے گی ۔ جماعت کی اس مہم کی متعدد ملی و سماجی تنظیموں کی جانب سے نہ صرف حمایت کا اعلان کیا گیا ہے بلکہ اس مہم کو کامیاب بنانے کے لیے کئی ملی تنظیمیں بھی اس میں حصہ لے رہی ہیں ۔ اسی طرح آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ بھی اس مہم کو وقت کی اہم ضرورت قراردے رہا ہے اور لوگوں سے اس میں حصہ لینے کی اپیل کی گئی ہے ۔ اس مہم کے ذریعہ برادران وطن تک بھی یہ بات پہنچانے کی کوشش کی جارہی ہے کہ اسلام کے عائلی قوانین کے بارے میں جو الزامات لگائے جارہے ہیں، اس میں کوئی سچائی نہیں بلکہ یہ محض ایک پروپیگنڈہ ہے جو اسلام اور مسلمانوں کو بد نام کرنے کے لیے کیا جا رہا ہے ۔

ناندیڑمیں جماعت اسلامی ہند کی شریعت بیداری مہم کا آغاز

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز