شیوسینا کا دعویٰ: سپریا سولے کو کابینی وزیر بنانا چاہتے تھے پی ایم مودی

Sep 11, 2017 11:43 AM IST | Updated on: Sep 11, 2017 11:43 AM IST

ممبئی۔ شیوسینا رکن پارلیمنٹ سنجے راوت نے دعوی کیا ہے کہ وزیراعظم نریندر مودی نے این سی پی سربراہ شرد پوار کی بیٹی سپریا سولے کو وزیر بنانے کی پیشکش کی تھی۔ شیوسینا کے ترجمان اخبار سامنا میں شائع مضمون میں اس بارے میں تفصیل سے لکھا گیا ہے۔

راوت نے شرد پوار کے ساتھ ایک ملاقات کا ذکر کرتے ہوئے، 'سامنا' کے ادارے میں لکھا کہ انہوں نے میڈیا میں پوار کی مودی کابینہ میں شمولیت کے بارے میں پوچھا تھا۔ انہوں نے لکھا، "پوار نے مجھے بتایا کہ میڈیا کی خبروں میں کوئی سچائی نہیں ہے۔ انہوں نے اس طرح کی خبروں کو احمقانہ  بتایا۔ پوار نے کہا تھا کہ میری پارٹی کے بارے میں افواہیں پھیلائی جا رہی ہیں۔ مودی نے ایک بار مجھ سے کہا تھا کہ وہ سپریا کو اپنی کابینہ میں چاہتے ہیں۔ سپریا اس میٹنگ میں موجود تھیں اور انہوں نے کہا کہ وہ بی جے پی میں جانے والی آخری شخص ہوں گی۔

شیوسینا کا دعویٰ: سپریا سولے کو کابینی وزیر بنانا چاہتے تھے پی ایم مودی

پوار نے کہا تھا کہ میری پارٹی کے بارے میں افواہیں پھیلائی جا رہی ہیں۔

شیوسینا ممبر پارلیمنٹ نے ساتھ ہی کہا کہ پوار نے ان سے کہا کہ این سی پی کا موقف واضح ہے۔ پھر بھی بھرم پیدا کرنے کے لئے افواہیں پھیلائی جاتی ہیں۔  راوت نے کہا کہ شرد پوار کا یہ کہنا ہے۔ لیکن کچھ ایسے سینئر این سی پی رہنما ہیں جو وزیر اعلی دیویندر فڑنویس کے ساتھ رابطے میں ہیں۔ اگر این سی پی فڑنویس حکومت کا حصہ بننا چاہتی ہے اور وزیر اعلی این سی پی رہنماؤں کے ساتھ خفیہ ملاقاتیں کر رہے ہیں تو بھی شیو سینا کو فکر کرنے کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز