شیوسینا نے ملایا ہاردک پٹیل سے ہاتھ، گجرات میں بنایا وزیر اعلی کا امیدوار

Feb 07, 2017 07:41 PM IST | Updated on: Feb 07, 2017 07:43 PM IST

ممبئی۔  شیوسینا نے گجرات انتخابات کے لئے پاٹيدار تحریک کے لیڈر ہاردک پٹیل کو وزیر اعلی کے عہدے کے چہرے کے طور پر پیش کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ یہ معلومات شیوسینا چیف ادھو ٹھاکرے نے دی ہے۔ بتا دیں کہ گجرات میں پٹیل لیڈر اور ریاست میں بی جے پی کی آنکھوں کی کرکری بننے والے ہاردک پٹیل پیر دیر رات ممبئی پہنچ گئے۔ منگل کو انہوں نے شیوسینا کے سربراہ ادھو ٹھاکرے سے باندرا واقع ان کی رہائش گاہ ماتوشري پر ملاقات کی۔

ہاردک  پٹیل نے ممبئی مرر سے بات چیت میں کہا کہ وہ گورےگاوں سے شیوسینا کے امیدوار کے لئے بی ایم سی انتخابات میں تشہیرکریں گے۔ پٹیل نے یہ بھی کہا کہ وہ ہم خیال لوگوں سے جڑنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا، 'میں بھگت سنگھ اور بالاصاحب ٹھاکرے کو مثالی مانتے ہوئے بڑا ہوا ہوں۔ میں ویر ساورکر کی سرزمین پر آکر بہت خوش ہوں۔'

شیوسینا نے ملایا ہاردک پٹیل سے ہاتھ، گجرات میں بنایا وزیر اعلی کا امیدوار

پی ٹی آئی

وہیں، دوسری طرف شیوسینا کے سربراہ ادھو ٹھاکرے نے آج اشارہ کیا کہ ان کی پارٹی مہاراشٹر کی بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی زیر قیادت حکومت سے مستقبل قریب میں حمایت واپس لے سکتی ہے۔  ٹھاکرے نے گجرات کے پاٹيدار لیڈر ہاردک پٹیل کے ساتھ اپنی رہائش گاہ 'ماتوشري' پر منعقد مشترکہ پریس کانفرنس میں ایک سوال کے جواب میں کہا کہ بی جے پی کی قیادت والی حکومت سے حمایت واپس لینے کا فیصلہ مستقبل قریب میں کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے مثالی ضابطہ اخلاق نافذ ہونے کی وجہ سے حمایت واپس لینے کی تاریخ کا اعلان نہیں کیا۔ مسٹر پٹیل نے کہا کہ وہ شیوسینا کے بانی بال ٹھاکرے کے پیروکار ہیں۔ انہوں نے بی جے پی کا نام لئے بغیر کہا کہ حکومت میں ’ منفی طاقتیں' شامل ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز