شیوسینا ایم پی رویندر گائیکواڑنے 7 دن میں 7 مرتبہ کی ہوائی سفر کی کوشش ، سبھی ہوئیں ناکام

Mar 31, 2017 09:04 PM IST | Updated on: Mar 31, 2017 09:08 PM IST

ممبئی : شیوسینا کے ممبر پارلیمنٹ رویندر گائیکواڑ نے 7 دن میں 7 بار کی ہوائی سفر کی کوشش کی ،لیکن ایئرلائنس نے ان کی کوشش کو ناکام بنادیا ۔واضح رہے کہ شیوسینا کے رہنما روندر گائیکواڑپر ایئر انڈیا کے ملازم پیٹنے کا الزام ہے۔ ذرائع کے مطابق پٹائی کے معاملے میں گھرے گائیکواڑ کی ہوائی سفر کرنے کی تمام کوششیں ناکام ثابت ہو رہی ہیں۔ وہ گزشتہ 7 دنوں میں 7 بار ٹکٹ پرواز کے لیے بکنگ کرانے کی کوشش کر چکے ہیں، لیکن ہر بار ان کی کوشش ناکام رہی ۔

خبروں کے مطابق روندرگائیکواڑ نے منگل سے دہلی جانے کے لئے مبینہ طور پر 5 کوشش کیں، لیکن ہر بار ایئر انڈیا نے اسے پکڑ لیا۔ اس کے بعد انہیں ٹکٹ بکنگ کرنے کی اجازت نہیں دی گئی۔یہاں تک کہ ان کا ای ٹکٹ تک کو منسوخ کر دیا گیا، انہوں نے تین بار اپنے اوپن ٹکٹ پر سفر کرنے کی کوشش کی، لیکن ناکام رہے۔ اس کے بعد انہوں نے اپنے ہی نام کو الگ الگ طریقے سے لکھتے ہوئے دو بار نئے ٹکٹ خریدنے کی کوشش کی۔

شیوسینا ایم پی رویندر گائیکواڑنے 7 دن میں 7 مرتبہ کی ہوائی سفر کی کوشش ، سبھی ہوئیں ناکام

گائیکواڑ کی نام بدل کر ٹکٹ خریدنے کی کوشش کو بھی کامیابی نہیں ملی ہے، ایئر انڈیا اور انڈگو نے گائیکواڑ کے 24 مارچ دہلی سے پونے کے دو ٹکٹ کو بھی منسوخ کر دیا تھا۔ بتا دیں کہ روندر گائیکواڑ کے خلاف ایئر انڈیا سمیت 7 ایئر لائنز کمپنیوں نے کارروائی کرتے ہوئے ان کے ہوائی سفر پر پابندی عائدکی ہے، 56 سالہ گائیکواڑ مہاراشٹر کے عثمان آباد سے شیوسینا ایم پی ہیں۔

ایک ذرائع نے بتایاکہ گائیکواڑ نےاے آئی 806(ممبئی۔دہلی) اور اے آئی 551 (حیدرآباد دہلی) پرواز میں 29 مارچ کو ٹکٹ بک کرنے کی کوشش کی۔اس کے بعد انہوں نے جمعرات کو ناگپور۔دہلی کی پرواز میں ٹکٹ بک کرنے کی کوشش کی، لیکن ایئر انڈیا نے انہیں پکڑ لیا اور انہیں ٹکٹ بک نہیں کرنے دیاگیا،کیونکہ سسٹم میں انکا نام منفی طورپر ڈال دیا گیا ہے۔ منگل کو انہوں نے ممبئی سے دہلی کی صبح کی فلائٹ کے لئے ٹکٹ کرائے، جو منسوخ کر دیے گئے اس کے بعد انہوں نے دوسرے شہروں سے بھی ٹکٹ کرائے لیکن ٹکٹ منسوخ ہو گئے۔

ایئر انڈیاایک افسر نے بتایاکہ ہمیں یہ ہدایت دی گئی ہے کہ معزز ممبر پارلیمنٹ کو ہماری پرواز میں نہیں چڑھنے دیا جائے۔ وہ اوپن ٹکٹ کے ذریعے بھی سفر کرنے کی کوشش کر رہے تھے ،لیکن وہ اس میں کامیاب نہیں ہو پائے۔ غور طلب ہے کہ شیوسینا اپنے چپل بازرہنما پر لگی پابندی کو ہٹانے کے لئے لوک سبھا اسپیکر سمترا مہاجن سے بھی اپیل کر چکی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز