گجرات اسمبلی انتخابات میں تنہا میدان میں اترے گی شیوسینا ، 50 سیٹوں پر کھڑا کرسکتی ہے اپنا امیدوار

مرکز اور مہاراشٹر میں بی جے پی کے ہمراہ اقتدار حاصل کرنے والی شیوسینا اب گجرات اسمبلی انتخابات میں حصہ لینے کا ارادہ رکھتی ہے

Nov 09, 2017 10:02 PM IST | Updated on: Nov 09, 2017 10:02 PM IST

ممبئی: مرکز اور مہاراشٹر میں بی جے پی کے ہمراہ اقتدار حاصل کرنے والی شیوسینا اب گجرات اسمبلی انتخابات میں حصہ لینے کا ارادہ رکھتی ہے اور تقریباً40تا50 نشستوں پر وہ اپنا امیدوار کھڑا کریگی۔ شیوسینا کی گجراتی برادری کے شعبہ کے دو سینئر لیڈران راجول پٹیل اور ہیمراج شاہ فی الوقت گجرات میں مقیم ہیں اور امیدواروں کا انتخاب کررہے ہیں۔ ممبئی کے مضافات سے کونسلر راجول پٹیل نے کہا کہ فی الوقت وہ دیگر سینا لیڈران کے ہمراہ گجرات کا دورہ کررہے ہیں اور سینا سورت سے احمد آباد کے درمیان اپنے امیدوار قسمت آزمائی کے لئے اتارے گی۔

راجول پٹیل نے کہا کہ سورت سے احمد آباد کے درمیان ایک بڑی تعداد میں مہاراشٹر سے تعلق رکھنے والے افراد مقیم ہیں جو زمانہ قدیم سے ان علاقوں میں مختلف شعبوں سے وابستہ ہیں نیز چونکہ سینا کی مہاراشٹر کے عوام پر مضبوط پکڑ ہے لہذا توقع ہے کہ ہمارے امیدوار اچھی کارکردگی پیش کرینگے اور گجرات میں ہم اپنا کھاتا کھولنے میں کامیاب ہوسکیں گے۔

گجرات اسمبلی انتخابات میں تنہا میدان میں اترے گی شیوسینا ، 50 سیٹوں پر کھڑا کرسکتی ہے اپنا امیدوار

راجول نے مزید کہا کہ گجرات میں ہندوتوا کے ماننے والوں کی اکثریت میں اور سینا روز اول سے ہندوتوا کے ایجنڈے پر گامزن ہے جس کا گجرات انتخابات میں پارٹی کو فائدہ ہوگا۔انہوں نے مزید کہا کہ سینا کسی بھی پارٹی سے سیاسی مفاہمت نہیں کریگی البتہ اس ضمن میں پارٹی صدر اودھو ٹھاکرے ہی حتمی فیصلہ کرینگے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل اودھو ٹھاکرے نے این سی پی سربراہ شردپوار اور مغربی بنگال کی وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی سے بھی علاحدہ علاحدہ ملاقاتیں کی تھی۔ سیاسی پنڈتوں کا کہنا ہے کہ اب مہاراشٹر میں سینا بی جے پی رشتوں میں جلد ہی دراڑ پیدا ہوسکتی ہے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز