ایم آر ایف کی جانب سے یوم سرسید و تعلیمی کانفرنس کا انعقاد ، دسویں اور بارہویں کے ٹاپرس کو دئے گئے لیپ ٹاپ

Oct 16, 2017 11:31 PM IST | Updated on: Oct 16, 2017 11:31 PM IST

مالیگاؤں : مالیگاؤں میں مسلم ریزرویشن فیڈریشن کی جانب سے مسلم یونیورسٹی کے بانی سرسید احمد خان کے 200 سالہ یوم پیدائش کے موقع پر شہر کے مالیگاؤں ہائی اسکول کے وسیع گراؤنڈ میں یوم سرسید و تعلیمی کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ اس تقریب میں ایچ ایس سی، ایس ایس سی کے ٹاپرس کو انعامات سے نوازا گیا جبکہ شہر کے قدیم تعلیمی اداروں کے ذمہ داران کو سرسید ایوارڈ دیا گیا۔ شہرکی ایسی خواتین ، جنہوں نےتعلیمی اورسماجی میدان میں بہترین کام کیا ہے، انہیں فخرمالیگاؤں اور دخترمالیگاؤں ایوارڈ سے سرفراز کیا گیا۔ کانفرنس میں دسویں اور بارہویں کے طلبہ کے لئے تعلیمی اسکالر مبارک کاپڑی صاحب کا خصوصی لیکچر کا بھی اہتماکیا گیا تھا۔

مالیگاؤں شہر جسے مسجدوں و میناروں مدرسوں اور تعلیمی اداروں کا شہر کہا جاتا ہے ، اس شہر میں اُردو کے لئے اتنا کچھ کیا گیا ہے کہ اس شہرکو پورے مہاراشٹرمیں اُردو کا مانچسٹر کہا جاتا ہے۔ مسلم ریزرویشن فیڈریش کی جانب سے پچھلے چار سالوں سے شہر کے تعلیمی میدان میں انقلاب لانے کے لئے دسویں بارہویں اور سینئر کالج کے طلبہ کے لئے دسویں اور بارہویں کے بعد کیا کیا جائے، اس تعلق سے مہاراشٹر کے مشہور تعلیمی اسکالر مبارک کاپڑی کا لیکچر منعقد کیا جاتا رہا ہے۔ ایم آر ایف کی جانب سے منعقد اس تعلیمی بیداری کانفرنس میں تقریباً 3 گھنٹہ تعلیمی اسکالرس نے اپنے تجربات کی روشنی میں طالب علموں کو انجینئرنگ، وکالت ، کامرس ، سائنس کے ساتھ ایم پی ایس سی اور یو پی ایس سی کے امتحانات کے لئے ضروری رہنمائی کی۔ ہزاروں کی تعداد میں طلبہ ان اسکالرس کو سننے کے دوران گھنٹوں پین اور پینسل لے کر لکھتے نظر آئے۔

ایم آر ایف کی جانب سے یوم سرسید و تعلیمی کانفرنس کا انعقاد ، دسویں اور بارہویں کے ٹاپرس کو دئے گئے لیپ ٹاپ

کانفرنس میں دسویں جماعت تک عصری تعلیم کے ساتھ حفظ کرنے والے حفاظ کرام کو اعزاز سے بھی نوازا گیا اور ایسے طلبہ جنہوں نے دسویں اور بارہویں کے امتحانات میں نمایاں کامیابی حاصل کی ہے، انہیں میڈل دیا گیا۔ ایچ ایس سی اور ایس ایس سی میں ٹاپ کرنے والے طلبہ کو ایم آر ایف کی جانب سے لیپ ٹاپ کا تحفہ دیا گیا۔ مالیگاؤں کی ایسی شخصیات جنہوں نے تعلیمی میدان میں مخلصانہ کردار ادا کر کے شہر کے تعلیمی اداروں کو زندہ رکھا ہے ، انہیں سرسید ایوارڈ سے اور اسی طرح مالیگاؤں کی ایڈوکیٹ عرفانہ ہمدانی کو سماجی خدمت کے لئے مالیگاؤں رتن ایوارڈ سے نوازا گیا۔ا نہوں نے مالیگاؤں بم دھماکے کے ملزمین کو بے قصور ثابت کرنے کے لئے کافی بڑی قانونی کوششیں کیں وہیں اسلحہ معاملہ میں پولیس کی دلیلوں کو جھوٹا ثابت کرنے کے لئے عدالتی لڑائی لڑی ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز