اردو میڈیم سے تعلیم کا آغاز کرنے والی ارم تحلیل نے نیٹ میں حاصل کیا 30 واں رینک

Apr 05, 2017 08:02 PM IST | Updated on: Apr 05, 2017 08:02 PM IST

ناندیڑ۔ ارادے جن کے مضبوط اور نگاہیں منزل پر ٹکی ہوتی ہیں ان کےلیے کامیابی کا حصول مشکل نہیں ہوتا ۔ ایسی ہی ایک مثال ناندیڑ کی ہونہار طالبہ ارم تحلیل نے پیش کی ۔ ارم تحلیل  نے ریاضی کےمضمون سے نیٹ کے امتحان میں نمایاں کامیابی حاصل کی ہے ۔ انہیں قومی سطح پر 30 واں رینک ملا ہے ۔ ریاضی کے مضمون کوعام طورپر مشکل ترین اورنہایت پیچیدہ مضمون سمجھا جاتا ہے۔ اکثر طلبہ ریاضی کے مضمون میں ہی ناکام ہوتے ہیں ۔ ایسے میں ناندیڑ کی اس ہونہار طالبہ ارم تحلیل نے ریاضی کے مضمون سے نا صرف پوسٹ گریجوکیشن کی تعلیم حاصل کی بلکہ نیٹ کے امتحان میں بھی قومی سطح پر تیسواں رینک حاصل کیا ہے ۔

ارم کے والد غریبی کے سبب  اپنے بچوں کو مہنگے مہنگے ٹیوشن نہیں دلوا سکے لیکن ارم نے والد کی معاشی تنگی کو اپنی تعلیمی ترقی میں رکاوٹ نہیں بننے دی ۔ یہی وجہ ہے کہ ارم تحلیل کی اس کامیابی میں کسی بھی ٹیوشن کلاس کا کوئی دخل نہیں ہے ۔ خالص ذاتی محنت اور کالج کے اساتذہ کی رہنمائی کے ذریعہ اس نے اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوایا ہے ۔ ارم کے والد نے اپنے بچوں کو تعلیم دلانے کے لیے ہر طرح سے ان کی مدد کی ۔ محدود وسائل کے باوجود انہوں نے اپنے بچوں کو وہ تمام وسائل مہیا کرنے کی کوشش کی جو وہ کرسکتے تھے۔آج جبکہ ارم نے نیٹ جیسے مشکل ترین امتحان میں نمایاں کامیابی حاصل کی ہے تو اس کے والد بھی بہت خوش ہیں ۔

اردو میڈیم سے تعلیم کا آغاز کرنے والی ارم تحلیل نے نیٹ میں  حاصل کیا 30 واں رینک

ارم تحلیل نے اردو میڈیم سے ہی اپنی ابتدائی تعلیم کا آغاز کیا تھا ۔ ہائی اسکول اور جونیئر کالج کے بعد ریاضی میں بی ایس سی اور ایم ایس سی کا امتحان پاس کیا اور اب حال ہی میں قومی سطح پر منعقد ہونے والے نیٹ امتحان میں ریاضی کے مضمون میں  30 واں رینک حاصل کرتے ہوئے مسلم طلبہ کے سامنے ایک بہترین مثال قائم کی ہے ۔ارم تحلیل ان دنوں درس وتدریس کے شعبہ سے وابستہ ہیں اور مستقبل میں ریاضی کے مضمون میں پی ایچ ڈی کرنے کا منصوبہ رکھتی ہیں ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز