نامور گجراتی مزاح نگار اور کالم نویس پدم شری تارک مہتا چل بسے– News18 Urdu

نامور گجراتی مزاح نگار اور کالم نویس پدم شری تارک مہتا چل بسے

احمد آباد۔ نامور گجراتی مزاح نگار، ڈرامہ نگار اور کالم نویس پدم شری تارک مہتا کا آج یہاں طویل علالت کے بعد انتقال ہو گیا۔

Mar 01, 2017 02:20 PM IST | Updated on: Mar 01, 2017 02:21 PM IST

احمد آباد۔  نامور گجراتی مزاح نگار، ڈرامہ نگار اور کالم نویس پدم شری تارک مہتا کا آج یہاں طویل علالت کے بعد انتقال ہو گیا۔ وہ 88 سال کے تھے۔ پسماندگان میں دوسری بیوی اندو اور اپنی پہلی بیوی سے پیدا ہونے والی بیٹی اشاني شامل ہیں۔ مسٹر تارک مہتا کے اہم مرتب ناول ’دنیا نے اُندھا چشمہ‘ کی بنیاد پر کامیابی کے کئی ریکارڈ بنانے والی مقبول مزاحیہ ٹیلی ویژن سیریل ’تارک مہتا کا الٹا چشمہ‘ بنائی گئی ہے۔ 26 دسمبر 1929 میں احمد آباد میں پیدا ہوئے مسٹر مہتا نے گجراتی ادب موضوع سے بی اے اور ایم اے کی پڑھائی ممبئی سے کی تھی۔حالات حاضرہ کے موضوعات کو الگ نظریہ سے دیکھنے والے ان کے ہفتہ وار سیریئل ’دنیا نے اُندھا چشمہ ‘ سال 1971 سے تقریباً 40 سال تک مسلسل جانی مانی گجراتی میگزین چترلیكھا میں شائع ہوتی رہی تھی۔

انہیں کئی طرح کے ایوارڈ ملے تھے اور سال 2015 میں انہیں پدم شری سے نوازا گیا تھا۔ٹیلی ویژن پر ان کے مرتب ناول پر مبنی سیریل ’سب ٹی وی‘ نے سال 2008 میں نشر کرنا شروع کیا تھا جس نے کچھ ہی عرصہ میں کامیابی کے ریکارڈ بنا ڈالے۔سیریئل کی نشریات اب بھی جاری ہیں۔ واضح رہے کہ مقبول عام ٹیلی ویژن سیرئیل ’’تارک مہتا کا اُلٹا چشمہ ‘‘ سے وابستہ ایک بھی آرٹسٹ گزشتہ 8سال سے شو چھوڑ کر نہیں گیا ہے۔ یہ ٹی وی پر 8سال قبل شروع کیا گیا تھا اور اب تک 1,900 ایپی سوڈ کامیابی کے ساتھ پیش کئے گئے ہیں ۔ گزشتہ آٹھ سال سے بلا وقفہ 1,900 ایپی سوڈ پیش کرکے عالمی ریکارڈ بنایا ہے۔ پہلے سیرئیل میں جس جوش و جذبہ سے کام کیا گیا تھا یہ سلسلہ برقرار ہے اور ایک بھی آرٹسٹ شو سے باہر نہیں کیا گیا ہے کیونکہ تمام فنکاروں کو سازگار ماحول فراہم کیا جاتا ہے اور کسی بھی فنکار میں انانیت نہیں پائی جاتی ہے۔

نامور گجراتی مزاح نگار اور کالم نویس پدم شری تارک مہتا چل بسے

سیریئل  کے اہم فنکار دلیپ جوشی سمیت گجراتی ادب اور تھیٹر کی دنیا کی شخصیات اور ریاست کے وزیر اعلی وجے روپاني نے ان کے انتقال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا ہے۔ مسٹر روپاني نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہا ہے کہ لوگوں کے چہرے پر ہنسی لانے والے مسٹر مہتا کے انتقال کی خبر سے انہیں بہت دکھ پہنچا ہے۔ مسٹر مہتا کے اہل خانہ نے ان کی خواہش کے مطابق انتقال کے بعد ان کی لاش کے عطیہ کا فیصلہ کیا ہے۔

Loading...

Loading...